پاکستان اور بھارت کے درمیان جوہری تنصیبات اور قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ

پاکستان اور بھارت کے درمیان جوہری تنصیبات اور قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: پاکستان اور بھارت کے درمیان سالانہ بنیادوں پر جوہری تنصیبات کی فہرستوں اور قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ ہوا ہے جس کے مطابق بھارت میں 355 پاکستانی قید ہیں اور پاکستان میں بھارتی قیدیوں کی تعداد 628 ہے۔

تفصیلات کے مطابق دفتر خارجہ کے ترجمان کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان میں جوہری تنصیبات کی فہرست بھارتی ہائی کمیشن کے نمائندے کے حوالے کی گئی جبکہ نئی دہلی میں بھارتی وزارت خارجہ نے بھارتی جوہری تنصیبات کی فہرست پاکستانی ہائی کمیشن کے نمائندے کے حوالے کی۔

ترجمان دفترخارجہ نے بتایا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ بھی کیا گیا۔ پاکستان کی جانب سے بھارتی ہائی کمیشن میں جمع کرائی گئی فہرست کے مطابق پاکستان میں اس وقت 628 بھارتی قیدی ہیں جن میں 51 شہری اور 577 ماہی گیر شامل ہیں۔ 

ترجمان کا کہنا تھا کہ نئی دہلی کی جانب سے پاکستانی ہائی کمیشن میں جمع کرائی گئی فہرست کے مطابق بھارت میں اس وقت 355 پاکستانی قیدی ہیں جن میں 282 شہری اور 73 ماہی گیر شامل ہیں۔

ترجمان نے مزید بتایا کہ قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ 21 مئی 2008 کے پاک بھارت معاہدے کے تحت کیا جاتا ہے، معاہدے کے تحت سال میں دو مرتبہ، کم جنوری اور یکم جولائی کو قیدیوں کی فہرستوں کا تبادلہ کیا جاتا ہے۔