چیف الیکشن کمشنر، 2 ارکان اور سیکرٹری الیکشن کمیشن کیخلاف توہین عدالت کی درخواست دائر

چیف الیکشن کمشنر، 2 ارکان اور سیکرٹری الیکشن کمیشن کیخلاف توہین عدالت کی درخواست دائر

اسلام آباد: سپریم کورٹ آف پاکستان میں چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ ، 2 ارکان نثار احمد درانی، شاہ محمد جتوئی اور سیکرٹری الیکشن کمیشن کیخلاف توہین عدالت کی درخواست دائر کر دی گئی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ سپریم کورٹ نے مارچ 2021ءمیں سینیٹ کے حوالے سے فیصلہ دیا تھا کہ صاف و شفاف انتخابات کیلئے ہر وہ راستہ اختیار کیا جائے جس سے الیکشن میں شفافیت برقرار رہے مگر ایسا نہیں ہوا لہٰذا ان سب افسران کیخلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔

جوڈیشل ایکٹیوازم پینل کے سربراہ اظہر صدیق نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ الیکشن کمیشن نے انتخابات میں جدید ٹیکنالوجی ابھی تک استعمال نہیں کی اور ووٹنگ کیلئے الیکٹرانک ٹیکنالوجی بھی شروع نہیں کی گئی۔ 

ان کا کہنا تھا کہ انتخابات میں جدید ٹیکنالوجی اور الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے استعمال کے حوالے سے کئی خط لکھے گئے مگر عملدرآمد نہ ہوا جبکہ الیکشن میں کرپشن اور دھاندلی کرنے والوں کیخلاف بھی تاحال کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔

مصنف کے بارے میں