ہائی ٹرانسمیشن لائنز ٹرپ ہو گئیں، لوڈ شیڈنگ میں اضافے کا امکان

نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی لمیٹڈ کی ہائی ٹرانسمیشن لائنز ٹرپ ہونے سے چار چشمہ پاور پلانٹس بند ہو گئے۔۔۔فائل فوٹو

لاہور: نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی لمیٹڈ (این ٹی ڈی سی) کی ہائی ٹرانسمیشن لائنز ٹرپ ہونے سے چار چشمہ پاور پلانٹس بند ہو گئے۔این ٹی ڈی سی کی ہائی ٹرانسمیشن لائنز ٹرمپ ہونے سے چار چشمہ پاور پلانٹس بند ہو گئے جس کے نتیجے میں 1200 میگا واٹ بجلی سسٹم سے نکل گئی۔

اس کے علاوہ 3600 میگاواٹ کے تین آر ایل این جی پلانٹس بھی ٹیسٹنگ کی وجہ سے بند ہیں۔ اس ساری صورتحال کے باعث عارضی طور پر ملک میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ میں اضافے کا امکان ہے۔

 

مزید پڑھیں: 'زرداری 'اینٹ سے اینٹ بجانے' کے بیان کے بعد معافی کی درخواست بھجواتے رہے'

ترجمان توانائی ڈویژن کے مطابق صوبوں سے کم طلب کی وجہ سے پن بجلی کی پیداوار میں کمی ہے اور نئے نیلم جہلم پلانٹس بھی ٹیسٹنگ پر ہیں۔ فوری طور پر 220 کے وی کی این ٹی ڈی سی لائنز بحال کر دی گئی ہیں تاہم چشمہ نیوکلیئر پلانٹس سے بجلی کی بحالی میں کچھ وقت درکار ہے۔

 

آج رات تک چشمہ 1 اور چشمہ 2 کی بحالی کا امکان ہے تاہم چشمہ 3 اور چشمہ 4 سے بجلی بحالی میں زیادہ وقت لگ سکتا ہے۔ سسٹم کی حفاظت کیلئے تمام بجلی تقسم کار کمپنیوں میں عارضی طور پر لوڈ مینجمنٹ شروع کر دی گئی ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں