این اے 249 میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی بجائے ری پولنگ ہونی چاہئے: فواد چوہدری

این اے 249 میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی بجائے ری پولنگ ہونی چاہئے: فواد چوہدری
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے کہا کہ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 249 میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے بجائے ری پولنگ ہونی چاہئے کیونکہ ووٹرز کا ٹرن آؤٹ بہت کم رہا۔ 

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہا کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے حکم امتناع دے کر اچھا کیا، این اے 249 میں ٹرن آؤٹ بہت کم رہا ، حلقے میں دوبارہ گنتی کے بجائے ری پولنگ ہونی چاہیے، اپوزیشن جماعتیں انتخابی اصلاحات کیلئے تیار نہیں تو روئیں بھی نہیں ، پیپلز پارٹی امیدوار کی جیت پر سب پارٹیوں نے تنقید کی۔

واضح رہے کہ این اے 249 ضمنی انتخاب میں حصہ لینے والے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے امیدوار مفتاح اسماعیل کی درخواست پر الیکشن کمیشن کے دو رکنی کمیشن نے حکم امتناع جاری کرتے ہوئے حتمی نتائج روک دئیے ہیں، کمیشن نے موقف اختیار کیا کہ وہ درخواست سے مطمئن ہے اور یہ الیکشن کمیشن کی مداخلت کا کیس ہے۔ 

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ دوبارہ ووٹوں کی گنتی کی درخواست 4 مئی کو سماعت کیلئے مقرر کی گئی ہے جس کیلئے فریقین کو نوٹس جاری کردئیے گئے ہیں۔ خیال رہے کہ این اے 249کراچی میں مسلم لیگ (ن) کے امیدوارمفتاح اسماعیل نے ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی درخواست دی تھی۔

29 اپریل کو ہونے والے ضمنی انتخاب میں پیپلز پارٹی کے امیدوار قادر خان مندوخیل کامیاب قرار پائے تھے جبکہ مفتاح اسماعیل کچھ ووٹوں کے فرق سے دوسرے نمبر پر رہے تھے۔