سیاست میں عمران خان کا مقابلہ مشکل ہی نہیں ناممکن ہے: اسد عمر

سیاست میں عمران خان کا مقابلہ مشکل ہی نہیں ناممکن ہے: اسد عمر

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما اسد عمر نے سیاسی مخالفین کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کو نظر آگیا کہ سیاست میں عمران خان کا مقابلہ مشکل ہی نہیں ناممکن ہے۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی رہنما بابر اعوان ایڈووکیٹ کے ہمراہ اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت میں عمران خان کی پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ عمران خان صرف پاکستان کے نہیں بلکہ عالم اسلام کے لیڈر سمجھے جاتے ہیں۔ 

اسد عمر نے کہا کہ حکمران جھوٹے مقدمات کے ذریعے عمران خان کا کچھ نہیں بگاڑ رہے بلکہ ملک کی ساکھ مجروح کر رہے ہیں، یہ جتنا عمران خان کو دبانے کی کوشش کر رہے ہیں وہ اتنے ہی مقبول ہوتے جا رہے ہیں، مسئلے کا ایک ہی حل ہے کہ الیکشن کرائیں اور عوام کو فیصلہ کرنے دیں۔

ان کا کہنا تھا کہ وزارت داخلہ کا سیل متعدد بار بتا چکا ہے کہ عمران خان کو شدید خطرہ ہے، اگر آپ کے خیال میں آپ مقبول ہیں تو سیاست کے میدان میں آ کر مقابلہ کریں لیکن یہ جانتے ہیں کہ سیاست میں عمران خان کا مقابلہ مشکل ہی نہیں بلکہ ناممکن ہے۔ 

اس موقع پر عمران خان کے وکیل بابر اعوان ایڈووکیٹ نے کہا کہ عمران خان کے خلاف مقدمے میں انہوں نے آگے لگانے، قتل کی دھمکی دینے سمیت 4 نئی دفعات شامل کیں، اب ان کے پاس وقت ہے کہ اپنے جھوٹ کیسز واپس لیں، کل عمران خان کی ذاتی سیکیورٹی کو بھی عدالت کے اندر نہیں آنے دیا گیا تھا۔

بابر اعوان نے کہا کہ پولیس کے بیان سے شہداءکی دل آزاری ہوئی ہے، لکھوایا گیا کہ پولیس عمران خان کے بیان کے بعد خوفزدہ ہو چکی ہے، سیکیورٹی تھریٹ سے متعلق سرکار نے لکھ کر بھیجا ہے، اسد عمر لاہور میں تھے مگر ان کے خلاف مقدمہ اسلام آباد میں درج ہو گیا، ہم جھوٹے مقدمے بنانے والوں پر مقدمات کریں گے۔

مصنف کے بارے میں