نریندر مودی کے دورہ مقبوضہ کشمیر پر وادی میں مکمل ہڑتال، حریت قیادت نظر بند اورکرفیو نافذ

نریندر مودی کے دورہ مقبوضہ کشمیر پر وادی میں مکمل ہڑتال، حریت قیادت نظر بند اورکرفیو نافذ

سری نگر/مظفرآباد: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے دورے کے خلاف اتوار کو وادی میں شٹر ڈاﺅن ہڑتال کی گئی۔بھارتی وزیراعظم نریندر مودی جموں سرینگر نیشنل ہائی وے پر 9.2کلو میٹر طویل سرنگ کے افتتاح کے لیے مقبوضہ کشمیر کے دورہ کے موقع پر حریت قیادت کی اپیل پر پوری مقبوضہ وادی میں شٹر ڈان ہڑتال کی گئی جبکہ احتجاج روکنے کے لیے اہم سڑکوں پر بھارتی فوج کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے۔ وادی کے مختلف شہروں میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے اور حریت قیادت کو گھروں میں نظر بند کر دیا گیا ہے۔
بھارتی وزیراعظم کے دورہ جموں و کشمیر کے خلاف آزاد کشمیر کے دارالحکومت مظفرآباد میں احتجاج کیا گیا اور کشمیری مہاجرین اور شہریوں نے سنٹرل پریس کلب کے باہرمظاہرہ بھی کیا۔واضح رہے کہ گذشتہ برس جولائی میں تحریک آزادی کے کمانڈر برہان مظفر وانی کی شہادت کے بعد سے مقبوضہ کشمیر میں شروع ہونے والی آزادی کی تحریک کو کچلنے کے لئے قابض بھارتی فوج وادی میں انسانیت سوز مظالم ڈھا رہی ہے۔ جس میں اب تک سیکڑوں کشمیری شہید اور ہزاروں زخمی ہوچکے ہیں جب کہ قابض فوج کے مظاہرین پر پیلٹ گن کے استعمال سے سیکڑوں کشمیری بصارت سے بھی محروم ہو چکے ہیں۔