عمران پر الزام لگانے کے بعد عائشہ گلالئی سے متعلق انکشافات سامنے آ گئے

عمران پر الزام لگانے کے بعد عائشہ گلالئی سے متعلق انکشافات سامنے آ گئے

لاہور: تحریک انصاف سے راستے جدا کرنے والی عائشہ گلالئی کی جانب سے انکشافات کا سلسلہ جاری ہے تو دوسری طرف انکے حوالے سے بھی انکشافات سامنے آ رہے ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق عائشہ گلالئی کی پریس کانفرنس پر عمران خان مسکراتے رہے اور انکا کہنا تھا کہ ایک دن پہلے تک عائشہ گلالئی کے لئے انکا کردار ٹھیک تھا۔  پارٹی ذرائع کے مطابق عمران خان نے عائشہ گلالئی کی جانب سے این اے 101 کی ٹکٹ کے مطالبے پر دو ٹوک جواب دیا کہ اس ضمن میں فیصلہ پارلیمانی بورڈ کرے گا۔


عمران خان کی جانب سے عائشہ گلالئی کی ناقص پارلیمانی پرفامنس پر بھی سرزنش کی گئی اور انہیں بتایا گیا کہ چار سال میں وہ صرف 47 دن قومی اسمبلی کے اجلاس میں شریک ہوئیں اور پارٹی کی پارلیمانی لیڈرشپ انکی کارکردگی سے بالکل مطمئن نہیں۔

ذرائع کے مطابق عائشہ گلالئی ایک سال سے پارٹی کے لئے فنڈ ریزنگ بھی کر رہی تھیں اس ضمن میں ان سے حساب مانگا گیا تو یہ معاملات بھی ناراضی کا باعث بنے۔

رپورٹس کے مطابق عائشہ گلالئی کی امیر مقام سے ملاقات کا بھی انکشاف ہوا ہے۔ اسی ملاقات کے بعد عائشہ گلالئی نے پارٹی چھوڑنے کا فیصلہ کیا اور کھل کر عمران خان کے خلاف میدان میں آ گئیں۔ یاد رہے گزشتہ روز پریس کانفرنس کرتے ہوئے پی ٹی آئی ایم این اے عائشہ گلالئی نے عمران خان پر شدید الزامات عائد کئے تھے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں