عالمی یوم حجاب ' نیویارک میں امریکی پرچم کا حجاب باندھ کر مسلم وغیرمسلم خواتین کی شرکت

 عالمی یوم حجاب ' نیویارک میں امریکی پرچم کا حجاب باندھ کر مسلم وغیرمسلم خواتین کی شرکت

نیویارک/لندن :عالمی یوم حجاب کے موقع پر نیویارک میں امریکی پرچموں کو سر پر حجاب کی صورت میں باندھ کر مسلم اور غیر مسلم خواتین نے بڑی تعداد میں شرکت کی،برطانوی وزیر اعظم بھی یورپ بھر میں حجاب کے خلاف کریک ڈاﺅن پر بول اٹھیں اورکہا کہ خواتین کو کیا پہننا ہے ،یہ ان کی چوائس ہونی چاہیے۔


نیویارک کے سٹی ہال کے اجتماع میں خواتین امریکی پرچم سروں پر باندھ کر جمع ہوئیں،جن میں صرف مسلم خواتین ہی نہیں بلکہ امریکا کی غیر ملکی خواتین بھی شامل تھیں،جوڈونلڈ ٹرمپ کی پالیسیوں کے خلاف مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کیلئے جمع ہوئی تھیں۔امریکا کے ساتھ برطانیہ کی پارلیمنٹ میں بھی یوم حجاب کے موقع پر خواتین کے حقوق پر بات کی گئی ۔

پاکستانی نڑاد رکن پارلیمنٹ تہمینہ شیخ نے وزیر اعظم ٹیریزامے پر زور دیا کہ وہ خواتین کے حقوق کیلئے آواز بلند کریں،جس پر ٹیریزامے نے کہا کہ خواتین کو حجاب پہنے میں آزادی ہونی چاہیے،خواتین کو کیا پہننا ہے یہ ان کی مرضی ہونی چاہیے۔عالمی حجاب ڈے کے موقع پر مسلمان خواتین سے اظہار یک جہتی کیلئے کئی ملکوں میں خواتین نے حجاب پہنا اور اپنی تصویریں سوشل میڈیا پر شیئر بھی کیں۔

دوسری جانب کئی یورپی ملکوں میں حجاب پر پابندی لگادی گئی ہے۔جرمن چانسلر انجیلا مرکل بھی چہرے کے مکمل حجاب پر پابندی کی حمایت کرچکی ہیں، جبکہ فرانس بھی عوامی مقامات پر پورے چہرے کے نقاب پر پابندی لگا چکا ہے۔