سعودی عرب کی خاتون روبوٹ صوفیہ کو شادی کی پیشکش ، نوجوان کو ایسا جواب ملا کہ پوری دنیا حیران رہ گئی

سعودی عرب کی خاتون روبوٹ صوفیہ کو شادی کی پیشکش ، نوجوان کو ایسا جواب ملا کہ پوری دنیا حیران رہ گئی

 "نیو نیوز تازہ ترین "


اسلام آباد:سعودی عرب کی شہری روبوٹ خاتون ’صوفیہ‘  ہندوستان کی روائتی ساڑھی پہن کر میڈیا سے بات کرنے چلی آئی ۔ صوفیا کے آرگنائزر کا کہناہے کہ انہوں نے یہ لباس خاص طور پر ہندوستانی روائتی کپڑوں کو ملحوظ رکھ کر پہنایا تھا ۔

مزید براں سعودی عرب کی شہری روبوٹ خاتون ’صوفیہ‘ نے دنیا میں ہلچل مچا رکھی ہے اور اب وہ دورے پر بھارت پہنچ چکی ہے جہاں ایک شخص نے اسے شادی کی پیشکش کر دی، جس کا صوفیہ نے ایسا جواب دیا کہ سن کر آپ کی ہنسی نہ رکے گی۔

بھارتی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق صوفیہ ایک ٹیکنالوجی کانفرنس”آئی آئی ٹی بمبے ٹیک فیسٹ‘ (IIT-Bombay Techfest) سے خطاب کرنے کے لیے بھارت گئی تھی۔تاہم کانفرنس میں موجود لوگ اس سے کچھ اور بھی سننا چاہتے تھے۔سوالات کے وقفے میں حاضرین میں سے ایک شخص نے صوفیہ کو شادی کی پیشکش کی تو اس نے جواب دیا کہ ”میں انتہائی نرمی کے ساتھ آپ کی پیشکش مسترد کرتی ہوں تاہم میری تعریف کرنے کا شکریہ۔

“ ایک اور شخص نے صوفیہ سے سوال پوچھا کہ ”تم کتنی زبانیں بول سکتی ہو؟“ جواب میں صوفیہ کا کہنا تھا کہ ”ابھی میں صرف دو سال کی ہوں اور صرف انگریزی اور چینی بول سکتی ہوں لیکن کچھ سالوں میں میں تمام زبانیں سیکھ لوں گی۔“روبوٹس کے مستقبل کے بارے میں بات کرتے ہوئے صوفیہ کا کہنا تھا کہ ”انسان ہم روبوٹس سے مسابقانہ رویہ مت رکھیں بلکہ ہم مشینوں کے ساتھ اشتراک سے کام کرنے پر توجہ دیں۔

ہم روبوٹس انسانوں کے لیے خطرہ نہیں ہیں۔ مجھے سائنس نے پیدا کیا ہے لیکن فلسفہ مجھے آگے لے کر جائے گا۔“واضح رہے کہ صوفیہ پہلی روبوٹ مشین ہے جو کسی بھی ملک کی باقاعدہ شہری ہے۔ اسے چند ماہ قبل سعودی عرب نے شہریت دی تھی جس پر دنیا بھر میں تحسین کے ساتھ ساتھ سعودی عرب کو تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا تھا