نانگا پربت پر لاپتہ ہونے والے غیر ملکی کوہ پیماوں کی تلاش روک دی گئی

نانگا پربت پر لاپتہ ہونے والے غیر ملکی کوہ پیماوں کی تلاش روک دی گئی

اسلام آباد:دیامیر میں دنیا کی نویں بلند ترین چوٹی نانگا پربت کو سر کرنے کی کوشش کے دوران لاپتہ ہونے والے دو غیر ملکی کوہ پیماو¿ں کو مردہ قرار دے کر تلاش کا کام بند کردیا گیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسپین سے تعلق رکھنے والے البرٹو زیرین اور ارجنٹائن کے ماریانو گالون کے لیے کوہ پیمائی کا بندوبست کرنے والی ٹور آپریٹنگ کمپنی سمٹ قراقرم کے مالک محمد اقبال نے بتایا کہ لاپتہ ہونے والے دونوں غیر ملکی کوہ پیماو¿ں کی تلاش کا کام روک دیا گیا ہے۔


ان کا کہنا تھا کہ پہاڑ کے اطراف ریسکیو ہیلی کاپٹر نے چکر لگایا تاہم وہاں انہیں کسی کے زندہ ہونے کے کوئی آثار نہیں ملے۔الپائن کلب آف پاکستان کے ترجمان کرار حیدری نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ دونوں کوہ پیماوں کو مردہ تصور کرتے ہوئے ریسکیو آپریشن بند کردیا گیا ہے۔ لاپتہ ہونے والے دونوں کوہ پیما اس 13 رکنی ٹیم کا حصہ تھے۔

جس نے دنیا کی نویں بڑی چوٹی نانگا پربت کو سر کرنے کے لیے اپنے سفر کا آغاز گزشتہ ماہ کیا تھا۔ موسم خراب ہونے کی وجہ سے ٹیم کے باقی ارکان بخیریت واپس بیس کیمپ پہنچنے میں کامیاب ہوگئے تھے تاہم ان دونوں کوہ پیماوں نے دوبارہ چوٹی سر کرنے کی کوشش شروع کی تھی اور گزشتہ ہفتے ان کا رابطہ اپنی ٹیم سے منقطع ہوگیا تھا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں