وزیراعظم شہباز شریف کے دورہ چین کا اعلامیہ جاری

وزیراعظم شہباز شریف کے دورہ چین کا اعلامیہ جاری

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف کے دورہ چین کا سرکاری اعلامیہ جاری کر دیا گیا، وزیراعظم نے پاک، چین سٹریٹجک تعاون پرمبنی شراکت داری کومزید مضبوط کرنے کے عزم کا اعادہ کیا، فریقین نے دوطرفہ تعلقات، علاقائی صورتحال اور بین الاقوامی سیاسی منظر نامے پرتفصیلی تبادلہ خیال کیا، دونوں فریقوں نے ابھرتے ہوئے عالمی چیلنجوں کے درمیان پاک چین سٹریٹجک تعاون پرمبنی شراکت داری کی اہمیت پراتفاق کیا۔ 

سرکاری اعلامیہ کے مطابق وزیراعظم پاکستان شہباز شریف نے 1 سے 2 نومبر تک چین کا سرکاری دورہ کیا، عہدہ سنبھالنے کے بعد وزیراعظم شہباز شریف کا پہلا دو طرفہ دورہ تھا، دورے کے دوران وزیراعظم شہباز شریف سے چین کے صدر شی جن پنگ نے ملاقات کی، وزیراعظم شہبازشریف نے چینی وزیراعظم اورنیشنل پیپلزکانگریس کی سٹیںڈنگ کمیٹی کے چیئرمین سے ملاقات کی، وزیراعظم نے چینی کمیونسٹ پارٹی کی مرکزی کمیٹی کے جنرل سیکرٹری کے طور پر دوبارہ منتخب ہونے پرصدرشی جن پنگ کو مبارکباد پیش کی، اور چینی صدر کی قیادت، دانشمندی، وژن اور عوام کی خوشحالی پر مبنی ترقی کے فلسفے کی تعریف کی۔ 

وزیراعظم نے پاک چین تعلقات کی مسلسل ترقی میں چینی صدر کے تعاون کو سراہا، وزیراعظم نے صدر شی جن پنگ کا دورہ پاکستان کی دعوت دی، جو انہوں نے قبول کر لی، صدرشی نے کہا کہ وہ جلد پاکستان کا دورہ کریں گے، دونوں رہنماؤں نے دو طرفہ تعلقات کو مزید گہرا کرنے کیلئے مل کر کام کرنے کا عہد کیا، وزیراعظم شہباز شریف نے 20ویں سی پی سی نیشنل کانگریس کے کامیاب اختتام پرچینی صدر کو مبارکباد پیش کی، اور چین کی ترقی، خوشحالی اورقومی تجدید کوفروغ دینے میں سی پی سی اوراس کی قیادت کے مرکزی کردار کو سراہا۔ 

چینی رہنماؤں نے وزیراعظم شہبازشریف کی پاک چین دوستی کیلئے دیرینہ عزم کو سراہا، وزیراعظم شہبازشریف نے پاک چین سٹریٹجک تعاون پرمبنی شراکت داری کومزید مضبوط کرنے کے عزم کا اعادہ کیا، فریقین نے دوطرفہ تعلقات، علاقائی صورتحال اور بین الاقوامی سیاسی منظر نامے پرتفصیلی تبادلہ خیال کیا، دونوں فریقوں نے ابھرتے ہوئے عالمی چیلنجوں کے درمیان پاک چین سٹریٹجک تعاون پرمبنی شراکت داری کی اہمیت پراتفاق کیا اور مختلف معاملات پر ایک دوسرے کے موقف کی تائید کی، چینی قیادت نے حالیہ سیلاب سے ہونے والے نقصانات پر افسوس کااظہار کیا اور مزید تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ 

وزیراعظم نے فراخدلانہ امداد پر چینی قیادت کا شکریہ ادا کیا، کراچی سرکلر ریلوے، ایم ایل ون، گوادر بندرگاہ، سی پیک سے جڑے منصوبوں کو مزید تیز کرنے اور اقتصادی ترقی کیلئے نئے منصوبے شامل کرنے پر اتفاق کیا گیا، چینی قیادت نے اپنے شہریوں کی سیکیورٹی کے حوالے سے حکومت پاکستان کے اقدامات کی تعریف کی، وزیراعظم نے بتایا کہ چینی شہریوں پر حملوں میں ملوث تمام ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے، دونوں ممالک کے درمیان متعدد شعبوں میں تعاون کیلئے مفاہمت کی یادداشتوں اور معاہدوں پر بھی دستخط کئے گئے۔

مصنف کے بارے میں