امریکہ نے غیر قانونی طور پر مقیم پاکستانیوں کو بے دخل کرنے کی حکمت عملی بنالی

امریکہ نے غیر قانونی طور پر مقیم پاکستانیوں کو بے دخل کرنے کی حکمت عملی بنالی
فائل فوٹو

اسلام آباد: امریکہ میں غیر قانونی مقیم پاکستانیوں کو بے دخل کرنے کیلئے حکمت عملی تیار کرلی گئی ہے۔رواں ماہ سے امریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم پاکستانیوں کے خلاف اپریشن شروع کیا جائے گا۔جس کے بعد لاکھوں پاکستانی وطن واپس بھیج دیے جائیں گے۔


تفصیلات کے مطابق امیگریشن کے نئے امریکی قوانین کے اطلاق کے بعدامریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم پاکستانیوں کو ملک بدر کردیا جائے گا۔ تاہم اس قانون کا اطلاق ایسے پاکستانیوں پر ہوگا جن کے ویزا میں توسیع کی درخواستیں مسترد ہوچکی ہیں، البتہ امریکہ میں کام کرنے والے اور انسانی بنیادوں پر پناہ حاصل کرنے والے افراد پر نہیں ہوگا۔

امریکی سٹیزن اور امیگریشن سروسز کا کہناہے کہ اس قانون کا اطلاق امریکہ میں مستقل کام کرنے والے اور انسانی بنیادوں پر درخواست گزاروں پر نہیں ہوگا۔البتہ جن پاکستانیوں کی ایچ، ون بی ویز ا کے تحت درخواستیں مسترد ہوچکی ہیں اور اس کے باوجود وہ امریکہ میں چھپ کررہ رہے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق امریکہ انتظامیہ نئے قوانین کے تحت ایسے تمام غیر ملکیوں کو نوٹس جاری کررہی ہے اور انکی درخواستوں سے متعلق تازہ ترین صورتحال جاننے کے بعد فیصلہ کیا جائے گا۔ایچ ون بی ویزا پالیسی کے تحت ایسے تمام پاکستانی جو امریکہ میں اپنے قیام کے دوران غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث رہے ہوں انہیں امریکی قوانین کے تحت سزا ہوسکتی ہے۔ واضح رہےٹرمپ انتظامیہ نے امیگریشن کے نئے قوانین کے تحت غیر قانونی مقیم غیر ملکیوں کو امریکہ سے بے دخل کردیا جائے گا۔