جھنگ کے طالبعلم کے اکاﺅنٹ سے 17 کروڑ روپے نکل آئے

جھنگ کے طالبعلم کے اکاﺅنٹ سے 17 کروڑ روپے نکل آئے
سکرین شاٹ

جھنگ: پراسرار طور پر لوگوں کے اکاﺅنٹس میں کروڑوں روپے نکلنے کا سلسہ جاری ہے اور کراچی کے فالودے والے کے بعد اب باری آگئی ہے ایک طالبعلم کی ۔


جھنگ کے رہنے والے طالبعلم کے اکاﺅنٹ سے 17 کروڑ روپے نکل آئے ہیں جس کی تحقیقات کیلئے نیب نے نوجوان کو آج طلب کرلیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق جعلی بینک اکاؤنٹ کا ایک اور کیس سامنے آگیا، جھنگ میں سیٹلائٹ ٹاؤن کے رہائشی نوجوان اسد علی کے اکاؤنٹ میں 17 کروڑ روپوں کا انکشاف ہوا ہے جب کہ اسد علی نے اس سے متعلق لاعلمی کا اظہار کیا ہے۔

دوسری جانب ایف آئی اے نے طالب علم کو اکاؤنٹ اور ٹیکس گوشواروں سمیت پراپرٹی کی تفصیل کے ساتھ آج پیش ہونے کا نوٹی فکیشن جاری کردیا، اسد علی کے اہل خانہ ایف آئی اے کا نوٹی فکیشن ملنے کے بعد پریشانی میں مبتلا ہوگئے۔

نوجوان کے گھروالوں کہنا ہے کہ اسد انجینئرنگ مکمل کرنے کے بعد نوکری کی تلاش میں ہے، اکاو¿نٹ میں پیسے کہاں سےآئے انہیں اس حوالے سے کچھ پتا نہیں۔

خیال رہے کہ اورنگی ٹاؤن کے رہائشی عبدالقادر نامی شخص کو ایف آئی اے نے طلب کیا تھا جس پر اسے علم ہوا کہ اس کے نام پر بینک اکاؤنٹ ہے اور اس میں 225 کروڑ روپے کی رقم موجود ہے جب کہ عبدالقادر نے اپنے موقف میں کہا تھا کہ وہ انگوٹھا چھاپ ہے اور 40 گز کے مکان میں رہتا ہے، رقم سے اس کا کوئی تعلق نہیں۔