منی لانڈرنگ کیس، حمزہ شہباز کے جسمانی ریمانڈ میں مزید 7 دن کی توسیع

منی لانڈرنگ کیس، حمزہ شہباز کے جسمانی ریمانڈ میں مزید 7 دن کی توسیع
عدالت نے حمزہ شہباز کو 10 اگست کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا۔۔۔۔۔فوٹو/ ن لیگ فیس بُک پیج

لاہور: منی لانڈرنگ اور آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے کیس میں احتساب عدالت نے اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کے جسمانی ریمانڈ میں مزید 7 دن تک توسیع کر دی۔


احتساب عدالت کے جج امیر محمد خان نے اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کے خلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کی۔ تفتیشی افسر نیب حکام نے حمزہ شہباز سے مزید تفتیش کے لیے جسمانی ریمانڈ مانگا۔ عدالت نے تفتشی افسر سے استفسار کیا حمزہ شہباز کا ابتک کتنے دنوں کا جسمانی ریمانڈ دیا جا چکا ہے۔ تفتشی افسر نے بتایا حمزہ شہباز کا 52 دنوں کا ریمانڈ ہو چکا ہے۔

پراسکیوٹر نیب نے کہا کہ حمزہ شہباز اور سلمان شہباز نے ندیم سعید کو اسٹیل ری رولنگ ملز لگانے آفر کی تھی۔ ندیم سعید شامل تفتیش ہوگیا ہے اور بیان دیا ہے کہ سلمان شہباز سے مل کر یونی ٹاس اور ووڈ نیچر پرائیویٹ لمیٹڈ تشکیل دی تھی۔

عدالت نے حمزہ شہباز کے جسمانی ریمانڈ میں 7 روز کی توسیع کرتے ہوئے 10 اگست کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا۔