سابق اولمپین رشید الحسن کا پابندی کیخلاف عدالت جانے کا اعلان

سابق اولمپین رشید الحسن کا پابندی کیخلاف عدالت جانے کا اعلان
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: پاکستان کے سابق اولمپین رشید الحسن نے پاکستان ہاکی فیڈریشن (پی ایچ ایف) کی جانب سے عائد کی گئی 10 سال کی پابندی کیخلاف عدالت جانے کا اعلان کر دیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے اپنے دور کے معروف کھلاڑی رشید الحسن نے کہا کہ عمران خان نے بطور وزیر اعظم کوئی وعدہ پورا نہیں کیا جبکہ پاکستان ہاکی فیڈریشن (پی ایچ ایف) کی جانب سے پابندی عائد کئے جانے کای فیصلہ درست نہیں ہے۔ 

ان کا کہنا تھا کہ حکومت پاکستان کی ہدایات پر پابندی عائد کرنا غلط ہے، میں نے عمران خان کے خلاف کوئی توہین آمیز بیان نہیں دیا، انصاف کیلئے عدالت سے قانون کا دروازہ کھٹکھٹاؤں گا اور عدالت سے رجوع کروں گا۔ 

واضح رہے کہ پاکستان ہاکی فیڈریشن (پی ایچ ایف) نے وزیراعظم پاکستان عمران خان کے خلاف توہین آمیز بیانات دینے پر ہاکی لیجنڈ رشید الحسن پر 10 سال کی پابندی عائد کی ہے جبکہ پی ایچ ایف کے سیکرٹری آصف باجوہ نے پابندی عائد کئے جانے کی تصدیق بھی کی۔ 

پی ایچ ایف کے سیکرٹری آصف باجوہ نے بتایا کہ حکومت نے رشید الحسن کے ریمارکس کا سخت نوٹس لیا تھا اور سابق اولمپین نے پی ایچ ایف کے بھجوائے گئے شوکاز کا جواب بھی نہیں دیا تھا جبکہ یہ پابندی حکومت پاکستان کی ہدایات پر عائد کی گئی ہے۔

مصنف کے بارے میں