حکمران سہولیات نہ دے کر عوام کو دہشت گرد بنا رہے ہیں ، مصطفی کمال

حکمران سہولیات نہ دے کر عوام کو دہشت گرد بنا رہے ہیں ، مصطفی کمال

کراچی: پاک سر زمین پارٹی کے سربراہ مصطفی کمال نے کہا ہے کہ وہ آرمی چیف سے اپیل کرتے ہیں کہ دہشت گردوں کے خلاف آپریشن ردالفساد اور ضرب عضب کا کوئی فائدہ نہیں کیونکہ سہولیات نہ دے کر حکمران عوام کو سب سے بڑے دہشت گرد بنا رہے ہیں۔پاک سر زمین پارٹی کے سربراہ مصطفی کمال نے پریس کانفرنس کے دوران ممبر قومی اسمبلی جمشید دستی کے ساتھ جیل میں ہونے والے ناروا سلوک کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ انہیں ریاستی دہشتگردی کا نشانہ بنایا گیا ۔


مصطفیٰ  کمال نے کراچی کی خراب صورتحال پر بات کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کا معاشی حب کراچی گندگی کا ڈھیر بن چکا ہے،یہاں لوگوں کو پینے کیلئے صاف پانی تک فراہم نہیں کیا جارہا ،جگہ جگہ کچرے اور صفائی کے ناقص انتظام نے لوگوں کو پریشان کرکے رکھا ہوا ہے۔پاک سرزمین پارٹی کے چیرمین کا کہنا تھا کہ ہم نے 16 نکات پر 18 دنوں تک دھرنا دیا، ہمارے مطالبات میں نالوں کی صفائی اورپانی کی فراہمی شامل تھی،ہمارے مطالبات پر حکومت وقت نے کان نہیں دھرا، ہمیں ان حکمرانوں سے کوئی شکایت نہیں ہے کیونکہ انہیں ایسا ہی رہنا ہے،اصل فیصلہ پاکستان، سندھ اور کراچی کے عوام کو کرنا ہے کہ انھیں کیا کرنا ہے، عوام کب تک خاموشی سے لاشیں اٹھاتے رہیں گے وہ آواز کیوں نہیں اٹھاتے، حکمرانوں نے22 کروڑ لوگوں کو دہشتگرد بنادیاہے، وہ آرمی چیف سے اپیل کرتے ہیں کہ دہشت گردوں کے خلاف آپریشن ردالفساد اور ضرب عضب بند کردیں کیونکہ اس کا کوئی فائدہ نہیں۔ سہولیات نہ دے کر حکمران عوام کوسب سے بڑے دہشت گرد بنا رہے ہیں۔

نیوویب ڈیسک< News Source