شیخوپورہ کے نزدیک مسافر کوسٹر ٹرین کی زد میں آ گئی، 20 افراد ہلاک

شیخوپورہ کے نزدیک مسافر کوسٹر ٹرین کی زد میں آ گئی، 20 افراد ہلاک
تیز رفتار ٹرین کئی میٹر تک کوسٹر کو گھسیٹتی لے گئی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فوٹو/ اسکیرن گریب

شیخوپورہ: شیخوپورہ کے قریب فاروق آباد جاتری روڈ ریلوے کراسنگ پر مسافر کوسٹر ٹرین کے ساتھ ٹکرا گئی۔ حادثے میں 20 سکھ یاتری ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔


پشاور سے ننکانہ صاحب فوتگی پر آنے والی سکھ فیملی کی کوسٹر کو حادثہ ہوا۔ سکھ خاندان کے افراد تعزیت کے بعد سچا سودا میں مذہبی رسومات ادا کرنے کے بعد اپنی منزل کی جانب روانہ ہوئے۔ سکھ یاتریوں کی دو گاڑیاں بحفاظت گزر گئیں لیکن تیسری گاڑی کو حادثہ پیش آیا۔ ڈرائیور نے کچے راستے سے گزرنے کی کوشش کی۔

کوسٹر فیصل آباد سے لاہور کی طرف جانے والی نان سٹاپ ٹرین کے ساتھ ٹکرائی۔ تیز رفتار ٹرین کئی میٹر تک کوسٹر کو گھسیٹتی لے گئی۔ المناک حادثے میں کوسٹر لوہے کے ڈھیر میں تبدیل ہو گئی۔ حادثے کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو 1122 کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی۔ زخمیوں اور لاشوں کو ہسپتال منتقل کیا گیا۔

شیخ رشید نے ٹرین حادثے کا نوٹس لیتے ہوئے ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ طلب کر لی۔ وفاقی وزیر ریلوے نے ڈویژنل انجینئر کو معطل کر دیا۔ شیخ رشید نے ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کی ہدایت کر دی۔

 وزیر اعظم نے شیخوپورہ میں ٹرین حادثے پر افسوس اور قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ کا اظہار کیا۔ عمران خان نے زخمیوں کو بہترین طبی امداد فراہم کرنے کی ہدایت کر دی۔ وزیر اطلاعات شبلی فراز نے بھی واقعے پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا۔