پاک، بھارت آبی مذاکرات تعطل کا شکار

پاک، بھارت آبی مذاکرات تعطل کا شکار
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: پاکستان اور بھارت کے درمیان پانی کے معاملے پر مذاکرات تعطل کا شکار ہو گئے ہیں اور آبی ماہرین نے تین ماہ گزرنے کے باوجود بھی پاکستان کا دورہ نہیں کیا۔ 

میڈیا رپورٹس کے مطابق انڈس واٹر کمیشن حکام کے مطابق بھارتی آبی ماہرین نے تین ماہ گزرنے کے باوجود پاکستان کا دورہ نہیں کیا، سندھ طاس معاہدے کے تحت بھارتی وفد کو پاکستان کا دورہ کرنا تھا۔

انڈس واٹر کمیشن حکام کے مطابق پاکستان نے بھارت کو دورے کیلئے تین مراسلے بھی بھجوائے کیونکہ پاکستان نے بھارتی انڈس واٹر کمیشن کو مختلف سائٹ انسپکشن کرانی تھی، انڈس واٹر حکام نے بتایا کہ پاکستان کے اٹھائے گئے اعتراضات پر بھارت کو جواب بھی دینا تھا۔

ذرائع انڈس واٹر کمیشن کا کہنا ہے کہ انڈس واٹر ٹریٹی کے تحت سال یکم اپریل سے شروع ہوتا ہے اور بھارت میں ہوئے اجلاس میں طے ہوا تھا کہ بھارتی وفد بھی دورہ کرے گا مگر بھارت کی طرف سے ابھی تک دورے کا نہیں بتایا گیا ہے۔