اسلام آباد؛ کہتے وقت کے ساتھ شکلیں اتنا بدل جاتیں ہیں کہ دیکھنے والے بھی حیران رہ جاتے ہیں ۔ایسا ہی کچھ  ہو ا جہان سلطان اور اسکے بھائی کے ساتھ ۔تقریباََ 60 سال بعد بہن بھائی ایک دوسرے کی شکل موبائل ایپ ایمو پردیکھ کر بیہوش ہوگئے، 60 سال قبل سورہ کی بھینٹ چڑھنے والی گورکوہی عشیرئی درہ کی جہان سلطان مقبوضہ کشمیر میں پائی گئی۔

عشیرئی درہ گورکوہی کے رہائشی انعام الدین ولد خان میاں نے میڈیا کو بتایا کہ 60 سال قبل میرے دادا نے میری بہن جہان سلطان کو کم عمری میں سورہ میں دیا تھا جسے سسرال والوں نے راولپنڈی میں کہیں فروخت کر دیا تھا جس کے بعد وہ لاپتہ ہو گئی، بہن سے ملنے کے لیے ہم نے ملک کاکونا کونا چھان مارا لیکن کوئی معلومات نہیں ملیں ہم نے سوچا شاید فوت ہو گئی ہو گئی۔

8 جنوری کوضیا نامی نوجوان نے فیس بک پر پوسٹ جاری کی جس میں عشیرئی درہ گور کو ہی سے اپنا تعلق اور ہم کو ماموں بتانے کا ذکر کیا تھا جس کے بعد تیمرگرہ کے رحیم الدین اور اکرام نے معلومات کے بعد رابطہ کیا۔ 60 سال بعد سوشل میڈیا ایپ " ایمو" پر پر ملاقات ہوئی تو دونوں بہن بھائی بیہوش ہو گئے اور اب سفارتی سطح پران سے ملنے کی کوشش کر رہے ہیں۔