جہانگیر ترین گروپ کا عیدالفطر کے بعد لائحہ عمل طے کرنے کا فیصلہ

جہانگیر ترین گروپ کا عیدالفطر کے بعد لائحہ عمل طے کرنے کا فیصلہ
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

لاہور: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما جہانگیر ترین اور ان کے حامی اراکین اسمبلی نے شوگر سکینڈل کی تحقیقات کے حوالے سے عید کے بعد اپنا لائحہ عمل طے کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ 

نجی خبر رساں ادارے کے مطابق جہانگیر ترین گروپ کے اراکین پارلیمنٹ نے مشاورت کے بعد فیصلہ کیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے نامزد کردہ سینیٹر علی ظفر ایڈوکیٹ کی تحقیقات کا انتظار کیا جائے گا، عید کے بعد ٹکٹ ہولڈرز اور اراکین پارلیمنٹ سے مشاورت کی جائے گی اور پھر آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق علی ظفر ایڈووکیٹ کی ترین گروپ کے وکلاءاور اکاؤنٹنٹ سے ملاقات بھی ہوئی ہے جس میں انہوں نے کیس سے متعلق جہانگیر ترین کی ٹیم کا موقف سن لیا ہے جبکہ علی ظفر ایڈووکیٹ ایف آئی اے اور تفتیشی ٹیم سے بھی ملاقات کر چکے ہیں۔ 

دوسری جانب ذرائع کا کہنا ہے کہ مزید 4 اراکین قومی اسمبلی نے جہانگیر ترین سے رابطہ کیا ہے۔ خیال رہے کہ جہانگیر ترین اور ان کے بیٹے علی ترین کے خلاف آج کیس کی سماعت کے دوران بھی جہانگیر ترین کے وکیل نے موقف اختیار کیا تھا کہ نئی ٹیم کیس کی تحقیقات کر رہی ہے، ہمیں موقع دیا جائے تاکہ ہم تفتیش کا حصہ بنیں۔