پاکستان میں ہفتہ وار پروازوں کی تعداد میں واضح کمی، کس ائیرلائنز کی کتنی پروازیں آیا کریں گی؟ 

پاکستان میں ہفتہ وار پروازوں کی تعداد میں واضح کمی، کس ائیرلائنز کی کتنی پروازیں آیا کریں گی؟ 
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: سول ایوی ایشن اتھارٹی (سی اے اے) نے مختلف غیر ملکی ائیر لائنز کی فریکوئنسی میں مزید کمی کر دی ہے جس کے بعد پاکستان میں آنے والی پروازوں کی ہفتہ وار تعداد 590 سے کم ہو کر صرف 123 رہ جائے گی اور یہ فیصلہ 5 مئی سے 20 مئی تک نافذ العمل رہے گا۔ 

سول ایوی ایشن اتھارٹی کے اعداد وشمار کے مطابق قطر ائیرویز کی پاکستان کیلئے ہفتہ وار پروازوں کی تعداد 56 سے کم کر کے 11 کر دی گئی ہے اور اب قطر ائیرویز کراچی، لاہور اور اسلام آباد کیلئے 3 ،3 جبکہ پشاور اور سیالکوٹ کیلئے 1،1 پرواز آپریٹ کرے گی۔

 سول ایوی ایشن ذرائع کے مطابق گلف ائیر کی ہفتہ وار پروازوں کی تعداد 35 سے کم کرکے 8 کردی گئی ہے اور اب گلف ائیرکی کراچی کیلئے 2 جبکہ لاہور،اسلام آباد اور پشاور کیلئے 1،1 پرواز آپریٹ ہو گی، گلف ائیرکو فیصل آباد، سیالکوٹ اورملتان کیلئے بھی ایک ایک پرواز کی اجازت ہوگی۔ 

ترکش ائیر لائن کی ہفتہ وار پروازوں کی تعداد 21 سے کم کرکے 3 کر دی گئی ہے جس کے بعد ترکش ائیرکی کراچی، لاہور اور اسلام آباد کیلئے 1،1 پرواز آپریٹ ہوگی۔ دوسری جانب پگاسس ائیرکی ہفتہ وار پروازوں کی تعداد 4 سے کم کر کے ایک کردی گئی اور یہ واحد پرواز صرف کراچ کیلئے آپریٹ ہو گی۔ 

ذرائع کا کہنا ہے کہ اتحاد ائیرویز کی ہفتہ وارپروازوں کی تعداد32 سے کم کر کے 6 کر دی گئی ہے جس کے بعد اتحاد ائیر کی کراچی میں 1، لاہور میں 2 اور اسلام آباد میں 3 پروازیں لینڈ کرسکیں گی۔ سول ایوی ایشن کے مطابق سری لنکن ائیرلائنزکی ہفتہ وارپروازوں کی تعداد 4 سے کم کر کے 2 کردی گئی ہیں جس کے بعد سری لنکن ائیر لائنز کی کراچی اور لاہور کے 1،1 پرواز آپریٹ ہوسکے گی۔ 

اسی طرح تھائی ائیر لائنز کی ہفتہ وار پروازیں 18 سے کم کر کے 3کردی گئی ہیں جس کے بعد تھائی ائیر لائنز کی کراچی، لاہور اور اسلام آباد کیلئے 1،1 پرواز آپریٹ ہوسکے گی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مجموعی طور پرفلائٹ آپریشن 20 فیصد تک محدود کر دیا گیا ہے جبکہ پروازوں میں کمی کا حکم نامہ 5 مئی سے 20 مئی تک نافذالعمل رہے گا۔