سعودی عرب نے ایران کو صاف صاف سنا دیں

سعودی عرب نے ایران کو صاف صاف سنا دیں

ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے اپنے بیان کی میں کہا ہے کہ وہ علاقے میں اپنی غلط پالیسیوں کی اصلاح کرے،امریکہ کی جانب سے جوہری معاہدے کی خلاف ورزی کی صورت میں مختلف آپشن موجود ہیں۔


اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا کہ گذشتہ چار سال کے دوران ایران نے بارہا سعودی عرب کے ساتھ مسائل و اختلافات کے حل کے لئے اپنی آمادگی کا اعلان کیا لیکن سعودی عرب نے اس سلسلے میں کوئی بھی قدم نہیں اٹھایا۔

انھوںنے کہا کہ ایران نے بارہا کہا ہے کہ امریکہ کی خلاف ورزیوں کے جاری رہنے کی صورت میں تہران امریکہ کے اس قسم کے غیر تعمیری اقدامات کا مقابلہ کرنے کے لئے اپنے تمام آپشن استعمال کرے گا۔

محمد جواد ظریف نے کہا کہ ایران کے وزیر خارجہ نے ایران کی جانب سے کویت پرعراقی حملے کی مخالفت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران عالمی سطح پر مشترکہ سرحدوں کی اہمیت اور استحکام کا قائل ہے اور ملکوں کے داخلی امور میں عدم مداخلت کی پالیسی پر گامزن ہے اور ایران علاقائی ملکوں کو تقسیم کرنے کی پالیسی اور کوشش کے خلاف ہے اس لئے کہ یہ علاقائی ممالک کے استحکام کے خلاف ہے۔