آرمی چیف کا برطانوی وزارت دفاع کا دورہ ، گارڈ آف آرنر پیش کیا گیا

اسلام آباد: آرمی چیف جنرل قمرجاویدباجوہ 3 روزہ دورے پر برطانیہ میں ہیں جہاں انہوں نے برطانوی وزارت دفاع کا دورہ کیا ہے۔ اس موقع پر برطانوی سی جی ایس جنرل نک کارٹر نے آرمی چیف کا استقبال کیا،انہیں گارڈ آف آرنر بھی پیش کیا گیا۔

آرمی چیف کا برطانوی وزارت دفاع کا دورہ ، گارڈ آف آرنر پیش کیا گیا

اسلام آباد: آرمی چیف جنرل قمرجاویدباجوہ 3 روزہ دورے پر برطانیہ میں ہیں جہاں انہوں نے برطانوی وزارت دفاع کا دورہ کیا ہے۔ اس موقع پر برطانوی سی جی ایس جنرل نک کارٹر نے آرمی چیف کا استقبال کیا،انہیں گارڈ آف آرنر بھی پیش کیا گیا۔


آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق آرمی چیف نے برطانوی چیف آف ڈیفنس اسٹاف ،برطانوی نمائندہ خصوصی برائے افغانستان و پاکستان اوون جینکنس اور امریکی ریسولوٹ سپورٹ مشن کے کمانڈر جنرل جان نکولسن سے علیحد ہ علیحدہ ملاقاتیں کیں، جن میں باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا اس موقع پر کہنا تھا کہ پاکستان امن پسندملک ہے،جو خطے میں پائیدار امن و استحکام کے لیے اپنا مثبت کردار جاری رکھے گا۔انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن مشترکہ مفاد میں ہے،بارڈر سیکیورٹی میکنزم پاک افغان کے لیے اہمیت کا حامل ہے ، دونوں ممالک کو ترجیحی بنیادوں پربارڈر سیکیورٹی میکنزم طے کرنےکی ضرورت ہے۔آرمی چیف نے سی پیک منصوبے کے بارے میں کہا کہ سی پیک منصوبے کو خطے کے اقتصادی تناظر میں دیکھنا چاہیے، منصوبے کا مقصد علاقائی اور غیرعلاقائی اقتصادی ترقی ہے۔آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں تعاون پرحکومت برطانیہ کا شکریہ بھی ادا کیا،جبکہ برطانوی قیادت اور آرایس ایم کمانڈر نےامن واستحکام کے لیے پاک فوج کی کوششوں کو سراہا۔