کشمیری عوام کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے، وزیراعظم

کشمیری عوام کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے، وزیراعظم

 مظفر آباد: وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام مقبوضہ کشمیر کے عوام کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے۔ مظفرآباد میں آل پارٹیز حریت کانفرنس کے نمائندوں سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے ہر سطح پر کاوشیں جاری رکھے گا۔

وزیراعظم نے کہا کہ وہ خود اور کابینہ ارکان کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے آزاد کشمیر آئے ہیں۔ کابینہ کے خصوصی اجلاس میں مقبوضہ کشمیر کے عوام پر بھارتی فوج کے ظلم اور بربریت پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا گیا۔

وزیراعظم نے حریت نمائندوں کو بتایا کہ کابینہ کے خصوصی اجلاس میں بھارتی فوج کے ظلم اور جبر کی شدید مذمت کی گئی۔ وزیراعظم نے کہا کہ وزارت خارجہ اور تمام سفارتی سفارتی مشنز اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں پر عملدرآمد کرانے کے لیے متحرک ہیں ۔شاہد خاقان عباسی نے حریت کانفرنس کے رہنماؤں اور نمائندوں کی مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے کوششوں اور قربانیوں کو خراج تحسین پیش کیا۔

یہ بھی پڑھیں: 'اندر کی کہانی نہیں جانتا لیکن زرداری جو کام کر رہے ہیں وہ شرمناک ہیں'

وزیراعظم نے کہا کہ جس انداز سے مقبوضہ کشمیر کے عوام بھارتی جارحیت کا سامنا کر رہے ہیں وہ قابل قدر ہیں۔ پاکستان کی حکومت چھ اہم دارالحکومتوں میں اپنے نمائندے بھیجے گی تاکہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال اور وہاں پر جاری انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو دنیا بھر میں اجاگر کیا جا سکے۔

حریت رہنماؤں نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو مقبوضہ کشمیر میں حالیہ صورتحال سے آگاہ کیا۔ حریت نمائندوں نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں خصوصاً پیلٹ گنز کے استعمال پر تشویش کا اظہار کیا۔ آل پارٹیز حریت کانفرنس کے نمائندوں نے پاکستان کی حکومت اور وزیراعظم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کے واقعات کا فوری نوٹس لیا گیا اور کابینہ کا خصوصی اجلاس بلایا گیا۔ حریت نمائندوں نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی اور کابینہ ارکان کے دورہ آزاد کشمیر پر ان کا شکریہ ادا کیا۔

مزید پڑھیں: قربانیوں کے باوجود پاکستان پر الزامات عائد کیے گئے، ناصر جنجوعہ

وزیراعظم سے حریت نمائندوں کی ملاقات میں آزاد کشمیر کے وزیراعظم راجہ فاروق حیدر، صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان، مولانا فضل الرحمان، وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف، وزیر امور کشمیر چودھری برجیس طاہر، وفاقی وزرا مشاہد اللہ، رانا تنویر حسین اور ممتاز احمد تارڑ بھی موجود تھے۔ ملاقات میں حریت رہنما غلام محمد صفی، فیض نقشبندی، محمود ساگر، اشتیاق حمید، شمیم شال اور اعجاز لون شامل تھے۔

 

 

 نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں