تحریک انصاف نے پنجاب میں کسی جماعت سے اتحاد نہ کرنے کا فیصلہ کر لیا

تحریک انصاف نے پنجاب میں کسی جماعت سے اتحاد نہ کرنے کا فیصلہ کر لیا

لاہور: پاکستان تحریک انصاف کی قیادت نے آئندہ عام انتخابات کے لیے پنجاب میں کسی جماعت سے اتحاد نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ گزشتہ 5 سال کے دوران پنجاب کے سیاسی محاذ پر متعدد معاملات میں پاکستان عوامی تحریک، مسلم لیگ (ق) اور جماعت اسلامی نے تحریک انصاف کے اتحادی کا کردار ادا کیا تاہم اب پی ٹی آئی نے کسی بھی جماعت سے انتخابی اتحاد نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مزید پڑھیں: بدعنوانی جہاں بھی ہو احتساب کرنا نیب کا کام ہے، وزیراعلیٰ پنجاب

ذرائع کا کہنا ہے کہ سیاسی اتحاد کے معاملے پر عمران خان کا موقف ہے کہ اپنے ہی پلیٹ فارم سے الیکشن میں لڑنے سے پارٹی ڈسپلن برقرار رہتا ہے جب کہ انتخابی اتحاد میں معاملات کنٹرول سے باہر ہو جاتے ہیں اور ایسے سمجھوتے کرنے پڑتے ہیں جن کا اثر کئی برسوں تک رہتا ہے۔ اس لئے عمران خان نے سیاسی اتحادی جماعتوں کے قائدین سے کسی بھی قسم کے اتحاد سے معذرت کر لی ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں: کشمیری عوام کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے، وزیراعظم

یاد رہے آئندہ انتخابات کے قریب آتے ہی ملک باہر کی سیاسی جماعتوں میں جوڑ توڑ کا سلسلہ بھی جاری ہے اور سیاسی لوگ اپنی وفاداریاں بھی تبدیل کر رہے ہیں۔

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں