ڈینئل پرل کے قاتلوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی کوشش جاری رکھیں گے: امریکی وزیر خارجہ

ڈینئل پرل کے قاتلوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی کوشش جاری رکھیں گے: امریکی وزیر خارجہ
کیپشن:   ڈینئل پرل کے قاتلوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کی کوشش جاری رکھیں گے: امریکی وزیر خارجہ سورس:   file

واشنگٹن: امریکی وزیر خارجہ انٹونی جے بلنکن نے مقتول امریکی صحافی ڈینیئل پرل کے اہل خانہ کو یقین دہانی کرائی ہے کہ جوبائیڈن انتظامیہ ان کے لیے انصاف کی کوشش کرتی رہے گی۔

امریکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق ترجمان محکمہ خارجہ  نیڈ پرائس نے بتایا کہ سیکریٹری خارجہ انٹونی جے بلنکین نے جمعے کو ڈینیئل پرل کے اہل خانہ اور ان کے نمائندوں سے بات کی۔

  

نیڈ پرائس نے بتایا کہ ملاقات میں ڈینئل پرل کے اہلخانہ یقین دلایا گیا کہ امریکی حکومت ڈینیئل پرل کے اغوا اور قتل میں ملوث افراد کے لیے انصاف اور احتساب کے لیے پرعزم ہے۔

 ڈینیئل پرل وال اسٹریٹ جرنل کے ساؤتھ ایشیا بیورو میں کام کرتے تھے اور 2002 میں القاعدہ سے متعلق ایک کہانی کی تحقیقات کے دوران انہیں کراچی میں اغوا کیا گیا اور پھر قتل کردیا تھا۔

اس کے بعد سے امریکی انتظامیہ ڈینیئل پرل کے قتل کا انصاف کے حصول کے لیے پرعزم ہے۔ جوبائیڈن انتظامیہ نے بھی ڈینیئل پرل کیس کے متعدد ملزمان کو رہا کرنے کے حالیہ عدالتی احکامات پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

30 جنوری کو وزیر خارجہ انٹونی جے بلنکن نے پاکستانی ہم منصب شاہ محمود قریشی کو ٹیلی فون کیا اور ان پر زور دیا کہ وہ ان مشتبہ افراد کا احتساب یقینی بنائیں جو پہلے ہی اس معاملے میں نامزد کیے جا چکے ہیں۔

 ٹیلی فونک گفتگو کے ایک روز قبل جاری کردہ بیان میں امریکی  وزیر خارجہ انٹونی جے بلنکن نے مرکزی ملزم احمد عمر شیخ کو امریکا میں منتقل کرنے کی پیش کش کی تھی۔

انہوں نے کہا تھا کہ ڈینیئل پرل کے اغوا اور قتل میں ملوث افراد اور ان کی رہائی کے لیے کسی مجوزہ کارروائی میں ملوث افراد کو بری کرنے کے پاکستانی سپریم کورٹ کے فیصلے سے امریکا کو سخت تشویش ہے۔

امریکی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ ہم امریکی شہری کے خلاف بھیانک جرائم کے بعد بھی امریکا میں احمد عمر شیخ کے خلاف قانونی کارروائی کرنے کے لیے تیار ہیں۔

سپریم کورٹ کی جانب سے ڈینئل پرل قتل کیس کے ملزمان کو بری کرنے کا فیصلہ سنایا گیا تھا۔فیصلے کے خلاف سندھ حکومت کی اپیل بھی مسترد کردی گئی تھی۔ ملزموں کو اب کراچی کی جیل سے لاہور منتقل کردیا گیا ہے۔