پاکستان امن چاہتا ہے اور امن کیلئے مذاکرات ضروری ہیں، مشیر خارجہ

امرتسر: مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہا کہ پاکستان امن چاہتا ہے اور امن کے لیے مذاکرات ضروری ہیں۔ بھارت جب بھی راضی ہو پاکستان بات چیت کے لیے تیارہے۔میڈیا کے بجائے میز پرکسی بھی معاملے پر مذاکرات ہو سکتے ہیں ۔امرتسر میں مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے بھارتی اخبار سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشتگردی جامع مذاکرات کا موضوع ہے، جب بھارت سے بات ہوگی تو دہشتگردی پربھی بات ہوسکتی ہے۔میڈیا کے بجائے میز پرکسی بھی معاملے پر مذاکرات ہو سکتے ہیں ، باضابطہ مذاکرات نہ ہوں تو میڈیا کے ذریعے ڈائیلاگ سے منفی تاثر ہوتاہے۔سینئر بھارتی حکومتی عہدیدار نے کہا ہے کہ پاکستان سے باہمی سطح پر ملاقات کا امکان نہیں۔

امرتسر میں رات ڈنر پرسرتاج عزیز اور بھارتی سیکرٹری خارجہ جے شنکر میں مختصر گفتگو ہوئی ،سرتاج عزیز اور جے شنکر میں گرمجوش مصافحہ کیا گیا، دونوں نے ایک دوسرے کی خیریت دریافت کی۔امرتسر میں مشیر خارجہ سرتاج عزیز کی افغان صدر اشرف غنی سے ملاقات ہوئی ہے،اس ملاقات میں مشیر خارجہ اور افغان صدر میں امن ترقی اور افغانستان کے استحکام پر بات ہوئی ۔دوسری طرف بھارتی شہر امرتسر میں بھارت کے وزیر اعظم اور افغانستان کے صدر اشرف غنی کے درمیان ون آن ون ملاقات جاری ہے،دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کے لیے ملاقات کو اہم قرار دیا جا رہا ہے۔

مصنف کے بارے میں