ٹی ٹی پی کو مذاکرات کی میز پر لانے کی کوشش کی جا رہی ہے: وزیر داخلہ

ٹی ٹی پی کو مذاکرات کی میز پر لانے کی کوشش کی جا رہی ہے: وزیر داخلہ

اسلام آباد: وفاقی وزیرداخلہ رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کو مذاکرات کی میز پر لانے کی کوشش کی جارہی ہے تاہم اس کیلئے پہلی شرط یہ ہے کہ وہ ہتھیار ڈال کر خود کو قانون کے تابع کریں۔ 

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ریاست کی دہشت گردی کے خاتمے کیلئے کوششیں جاری ہیں لیکن انہیں عام نہیں کیا جا سکتا، مگر یہ بھی نہ سمجھا جائے کہ ریاست کچھ کر نہیں رہی۔ 

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنماءکا کہنا تھا کہ قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں دہشت گردی کے خلاف زیرو ٹالرنس کے عزم کا اعادہ کیا گیا جبکہ دہشت گردی کے واقعات سے بچنے کیلئے پیشگی اقدامات بھی اٹھائے جائیں گے۔ 

وزیر داخلہ نے کہا کہ جس طرح افغانستان میں طالبان حکومت ایک حقیقت ہے، اسی طرح ٹی ٹی پی کو مذاکرات کی میز پر لانے کی کوشش کی جارہی ہے لیکن اس کی پہلی شرط یہ ہے کہ وہ ہتھیار ڈال دیں اور خود کو آئین و قانون کے تابع کردیں۔

مصنف کے بارے میں