پاکستان ڈیفالٹ ہو گا اور نہ سیاسی مخالفین کا پروپیگنڈا زیادہ دیر تک چلے گا: وزیر خزانہ 

پاکستان ڈیفالٹ ہو گا اور نہ سیاسی مخالفین کا پروپیگنڈا زیادہ دیر تک چلے گا: وزیر خزانہ 

اسلام آباد: وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے وائٹ پیپر کو گمراہ کن اور حقائق کے برعکس قرار دے کر مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان ڈیفالٹ ہو گا اور نہ سیاسی مخالفین کا پروپیگنڈا زیادہ دیر تک چلے گا۔ 

تفصیلات کے مطابق پریس کانفرنس کرتے ہوئے اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ یہ وہی جماعت ہے جس نے اپنے دور حکومت میں تنقید کے سوا کچھ نہیں کیا اور پاکستان کو عالمی سطح پر بدنام کیا۔وینٹی لیٹر پر معیشت لانے والوں کو اپنے بیانات سے معیشت کو مزید نقصان پہنچانے کا کوئی حق نہیں۔ 

انہوں نے ڈیفالٹ کے خطرات کو پروپیگنڈا قرار دیتے ہوئے کہا کہ خود دوران حکومت صرف تنقید کرنے والے ہمیں معیشت ٹھیک کرنے نہیں دے رہے، گمراہ کن وائٹ پیپر جاری کر کے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) ملکی معیشت کو ڈبونے کے کارناموں کو نہیں چھپا سکتی۔

وفاقی وزیر خزانہ نے فلڈ لیوی اور بنکوں کے بے تحاشہ منافع پر ونڈ فال ٹیکس لگانے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا کہ ونڈ فال منافع کمانے والے بنکوں سے ٹھیک ٹھاک ٹیکس لیں گے، موجودہ حکومت نے 6 ماہ کی مختصر مدت میں 3000 ارب سے زائد محصولات اکٹھے کئے ہیں۔ 

اسحاق ڈار نے دعویٰ کیا کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے گزشتہ دورمیں ملکی معیشت تیزی سے ترقی کر رہی تھی اور معاشی شرح نمو6.1 فیصد تھی۔ پی ٹی آئی کو 2018 میں مستحکم معیشت کا حامل پاکستان ملا مگر وہ سیاسی مخالفین کی پگڑیاں اچھالنے کے سوا کچھ نہ کر سکے اور ان کے دور میں مالیاتی خسارہ عروج پر پہنچا جبکہ معاشی شرح نمو کم کر کے 3.12 فیصد لے آئے۔ 

اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ ہمارے دور میں دہشت گردی کی فضا تھی جبکہ پی ٹی آئی نے کسی سیکیورٹی آپریشن کیلئے فنڈز مختص نہیں کیے، پی ٹی آئی دور میں لوڈشیڈنگ کے معاملے پر توجہ نہیں دی گئی جبکہ ہم نے ضرب عضب جیسے چیلنجز اور بجلی کے شارٹ فال کو ختم کیا۔

وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ رواں مالی سال کیلئے فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے محصولات کا ہدف 7470 ارب روپے مقرر کیا ہے جبکہ موجودہ حکومت نے صرف 6 ماہ کی مختصر مدت میں 3000 ارب سے زائد محصولات اکٹھے کئے ہیں۔ 

مصنف کے بارے میں