پی ایس ایکس میں تیزی کا رجحان، 100 انڈیکس میں 728.65 پوائنٹس کا اضافہ

پی ایس ایکس میں تیزی کا رجحان، 100 انڈیکس میں 728.65 پوائنٹس کا اضافہ

کراچی:   پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں تیزی کا رجحان رہا، کے ایس ای 100 انڈیکس 728.65 پوائنٹس کے اضافے سے 45394.06 پوائنٹس پر بند ہوا، مارکیٹ سرمایہ میں 1 کھرب 13 ارب 10 کروڑ 52 لاکھ 83 ہزار 94 روپے کا اضافہ ہوگیا جبکہ خرید و فروخت میں بھی 3 کروڑ 36 لاکھ 19 ہزار 680 روپے حصص کی تیزی رہی۔

اسی طرح تجارتی حجم میں 87 کروڑ 47 لاکھ 67 ہزار 905 روپے کی تیزی ریکارڈ کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے دوسرے روز منگل کو پی ایس ایکس میں تیزی کا رجحان رہا اورکے ایس ای 100 انڈیکس 728.65 پوائنٹس کے اضافے سے 45394.06 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 423.74 پوائنٹس کی تیزی سے 23586.26 پوائنٹس پر بند ہوا۔

مارکیٹ میں اتار چڑھاؤ کے بعد کے ایس سی آل شیئر انڈیکس 444.73 پوائنٹس کا اضافہ رونماء ہوا جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں 1831.33 پوائنٹس کی تیزی ریکارڈ کی گئی۔ مزید برآں بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 30.92 پوائنٹس کے اضافے سے 18496.08 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 538.75 پوائنٹس کی تیزی سے 15675.08 پوائنٹس پر بند ہوا۔ حصص کی خرید و فروخت میں تیزی کی وجہ سے پی ایس ایکس - کے ایم آئی انڈیکس 383.55 پوائنٹس کے اضافے سے 22043.82 پوائنٹس پر بند ہوا۔

مارکیٹ میں مجموعی طور پر 361 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 237 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 101 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں مندی اور 23 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ سب سے زیادہ تیزی رفحان میز پروڈکٹس کے حصص کی قیمتوں میں ہوئی جس کے حصص کی قیمت 150 روپے کے اضافے سے 7000 روپے پر بند ہوئی۔ اسی طرح ہینوپاک موٹر ایکس ڈی کے حصص کی سودے بھی 62 روپے کی تیزی سے 1372 روپے پر بند ہوئے۔ سب سے زیادہ مندی یونی لیور فوڈز اور باٹا (پاک) کے حصص کی قیمتوں میں ہوئی۔ یونی لیور فوڈز کے حصص کی قیمت 150 روپے کی مندی سے 5800 روپے اور باٹا (پاک) کے حصص کی قیمت بھی 100 روپے کی کمی سے 3200 روپے رہ گئی۔

سب سے زیادہ کاروبار اینگرو پولیمر کے حصص میں ہوا جو 1 کروڑ 47 لاکھ 81 ہزار شیئرز رہا جس کی قیمت 34 روپے سے شروع ہو کر 34.90 روپے پر بند ہوئی جبکہ ٹی آر جی پاکستان لمیٹڈ کے 1 کروڑ 42 لاکھ 1 ہزار 500 حصص کے سودے 37.51 روپے سے شروع ہو کر 37.99 روپے بند ہوئے۔ مجموعی طور پر 19 کروڑ 1 لاکھ 6 ہزار 710 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم 9 ارب 70 کروڑ 95 لاکھ 85 ہزار 689 روپے رہا۔

مارکیٹ کیپیٹل 91 کھرب 95 ارب 13 کروڑ 22 لاکھ 12 ہزار 516 روپے سے بڑھ کر 93 کھرب 8 ارب 23 کروڑ 74 لاکھ 95 ہزار 610 روپے ہو گیا۔ فیوچر ٹریڈنگ میں 111 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 4 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں مندی اور 3 کمپنیوں کے حصص کی قیمت میں استحکام رہا جبکہ 4کروڑ 32 لاکھ 29 ہزار 500 حصص کا کاروبار ہوا۔

نیوویب ڈیسک< News Source