پی آئی اے کی پرائیویٹائزیشن کا معاملہ قانون کے مطابق حل ہوگا، غلام سرور

پی آئی اے کی پرائیویٹائزیشن کا معاملہ قانون کے مطابق حل ہوگا، غلام سرور

اسلام آباد :وزیر ہوا بازی غلام سرور خان نے پی آئی اے پائلٹس کے جعلی لائسنس کے معاملے سے متعلق کہاہے کہ پی آئی اے کی پرائیویٹائزیشن سے متعلق قانونی راستہ اختیار کرنے کا مشورہ دیا تھا اور قانون کے مطابق ہی اب پی آئی اے کی پرائیویٹائزیشن کا معاملہ حل ہوگا۔


انہوں نے کہاکہ پائلٹس سے متعلق جلدی کہا ہے نہ زیادہ کہا صرف سچ کہا ہے، حکومت کا وعدہ تھا جو بھی ہوگا سب عوام کے سامنے لائیں گے، اداروں کو ٹھیک کریں گے، احتساب اور اصلاحات جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ جن اداروں کو تباہ کیا گیا انہیں درست کرنے کی کوشش کریں گے، پی آئی اے میں ڈگریاں چیک کی گئی تو بہت لوگوں جعلی ڈگریاں سامنے آئیں۔غلام سرور خان نے کہا کہ ہمارے لیے سب سے مقدم لوگوں کی حفاظت ہے، لوگوں کی حفاظت ترجیح ہے.

عوام کے سامنے سچ رکھا ہے۔وزیر ہوا بازی کا یورپ و برطانیہ کی جانب سے فلائٹ آپریشن پر پابندی سے متعلق کہنا تھا کہ پی آئی اے فلائٹ آپریشنز ہمارے ویسے ہی دنیا بھر میں بند ہیں، اس وقت بیرون ملک سے پاکستانیوں کو واپس لایا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ چوری چھپے پائلٹس کو فارغ کررہے ہوتے تو الگ سے واویلا مچایا جارہا ہوتا۔