صنعاء:مصر میں ایک خطاط نے دنیا کا سب سے بڑا قرآن پاک کا نسخہ تیار کرنے کا دعوی کیا ہے۔سعد محمد اپنے آبائی علاقے بلقینا میں اسلامی خطاطی کرتے ہیں، انہوں نے700میٹر کا قرآن پاک کا نسخہ تیار کیا ہے جو ایسے کاغذ پرلکھا گیا ہے جسے لپیٹا بھی جاسکتا ہے۔

انتہائی پیچیدہ فنکاری سے آراستہ یہ ہینڈ سکرول 700 میٹر طویل ہے۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ جب یہ سکرول لپٹا ہوا نہیں ہوتا تو یہ معروف عمارت امپائر سٹیٹ بلنڈگ کی لمبائی سے تقریباً دو گنا بڑا ہے۔

سعد محمد کا کہنا ہے کہ وہ اس نسخے کو گنیز ورلڈ رکارڈ میں دنیا کے سب سے بڑے قرآن مجید کے نسخے کے طور پر شامل کرانا چاہتے ہیں۔گنیز کا کہنا ہے کہ اس کے پاس اب تک ہاتھ سے لکھے گئے قرآن پاک کا کوئی نسخہ موجود نہیں۔

گنیز بک کے مطابق دنیا کا قدیم ترین قرآن مشاف آف عثمان ہے جو کہ سنہ 655 میں تیار کیا گیا تھا اور اسلام کے تیسرے خلیفہ حضرت عثمان کے استعمال میں تھا۔ اب یہ705 صفحات کو ازبکستان سے بڑی حفاظت سے رکھا گیا تھا۔

2012 میں افغانستان میں قرآن کی ایک اور جلد شائع کی گئی جو کہ مکمل طور پر ہاتھ سے لکھی گئی تھی۔ اس کی لمبائی 2.2 میٹر اور چوڑائی 1.55 میٹر ہے۔ اس کے 218 صفحات ہیں اور اس کی بیرونی جلد 21 بکروں کے چمڑے سے بنائی گئی ہے۔ اس کا وزن 500 کلوگرام ہے اور اسے بنانے میں 5 سال لگے۔