روہنگیا مسلمانوں کے قتل عام میں اسرائیل کا بدترین کردار کھل کر سامنے آ گیا

یروشلم : روہنگیا میں مسلمانوں کے قتل عام کا اصل مجرم بے نقاب ہو گیا ہے ٗ اسرائیلی میڈیا کے مطابق اسرائیلی حکومت نے میانمار کو اسلحے کی فراہمی کا سلسلہ تیز کر دیا ہے


اسرائیلی اخبار ہاآرتض کے مطابق صیہونی حکومت کے ہتھیار برآمد کرنیوالے ادارے کے سربراہ میشل بن باروخ نے گزشتہ دنوں میانمار کا دورہ بھی کیا تھا جس کے دوران اسرائیلی جنگی کشتیوں کی فروخت کے معاملے پر بھی بات چیت ہوئی تھی۔


اس سے پہلے ستمبر دوہزار پندرہ میں میانمار کی فوجی کونسل کے ایک اعلی عہدیدار نے بھی اسرائیل کا دورہ اور صہیونی فوج کے سربراہ سے ملاقات کی تھی۔بعض مبصرین کا کہنا ہے کہ اسرائیل اور میانمار کے درمیان تعلقات میں گرمجوشی کے بعد سے روہنگیا مسلمانوں کے خلاف حملوں میں شدت اور ان کے نسلی تصفیے کا عمل تیز ہوگیا ہے۔