غلام فرید صابری کو دنیا چھوڑے 27 برس بیت گئے

غلام فرید صابری کو دنیا چھوڑے 27 برس بیت گئے
سورس:   file photo

لاہور، پاکستان کے معروف قوال غلام فرید صابری کو مداحوں سے بچھڑے 27 برس بیت گئے ۔ دنیا بھر میں اپنے فن سے پاکستان کا نام روشن کرنے والے فنکار کو آج بھی عوام فراموش نہیں کرپائے ۔ 

قوالی کو نئی جہتیں دلانے والے غلام فرید صابری 1930 کو بھارتی ریاست مشرقی پنجاب میں پیدا ہوئے ۔ بچپن سے ہی فن سے لگاؤ  نے ان کے اندر موسیقی کی محبت بڑھا دی اور پھر وہ بڑھتی عمر کے ساتھ موسیقی کی تربیت لیتے رہے ۔ 

سال 1985 میں ان کی قوالی " میرا کوئی نہیں ہے تیرے سوا " نے دنیا بھر میں مقبولیت کے ریکارڈ قائم کردیئے ۔ ان کی گائی ہوئی قوالی " تاجدار حرم ہونگاہ کرم " نے ان کو شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا ۔ پاکستان ہو یا بھار ت ہر کوئی ان کے گائے ہوئے کلام پر سر دھنتا نظر آیا ۔ 

صابری برادران کی گائی ہوئی کئی قوالیاں فلموں میں بھی شامل کی گئیں ۔غلام فرید صابری نے دنیا کے کونے کونے میں اپنے فن کا مظاہرہ کرکے داد سمیٹی ۔ 

غلام فرید صابری کو 5 اپریل 1994 کو دل کا دورہ پڑا جو  جان لیوا ثابت ہوا  لیکن ان کی قوالیاں آج بھی ان کے فن کا منہ بولتا ثبوت ہیں ۔