ورجن آئی لینڈ نے شریف خاندان کی تفصیلات فراہم کرنے سے انکار کر دیا

ورجن آئی لینڈ نے شریف خاندان کی تفصیلات فراہم کرنے سے انکار کر دیا

لندن: برٹش ورجن آئی لینڈ نے شریف خاندان کے حوالے سے تفصیلات فراہم کرنے سے انکار کر دیا ہے اور کہا ہے کہ پاکستانی حکام کی طرف سے بھیجی گئی درخواستیں ان کے قوانین کے مطابق نہیں۔ نجی ٹی وی کے مطابق درخواست رد کرنے کی وجہ بتاتے ہوئے ایک خط میں برٹش ورجن آئی لینڈ حکام کا کہنا ہے کہ جو حقائق پاکستان کی طرف سے بھیجی گئی درخواست میں بتائے گئے ہیں اس میں ایسا کوئی پس منظر بیان نہیں کیا گیا جو یہ ثابت کرتا ہو کہ برٹش ورجن آئی لینڈ میں قائم کمپنی یا افراد نے کوئی غیر قانونی کام کیا ہو۔


نیب ذرائع کی جانب سے فراہم کیے گئے خط میں برٹش ورجن آئی لینڈ حکام کی جانب سے کہا گیا ہے کہ درخواست میں یہ واضح ہونا ضروری ہے کہ افراد یا کمپنیوں کی طرف سے کرپشن کیسے کی گئی ہے۔

برٹش ورجن آئی لینڈ حکام کا یہ بھی کہنا ہے کہ متعلقہ کمپنیوں اور افراد کے بینک کے نام اور اکاؤنٹس کی تفصیلات بھی فراہم نہیں کی گئیں یعنی شریف خاندان کے حوالے سے نیب جو تحقیقات کر رہا ہے اس کی جانب سے برٹش ورجن آئی لینڈ کو متعلقہ بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات فراہم نہیں کی گئیں لہٰذا برٹش ورجن آئی لینڈ قوانین کے مطابق تعاون فراہم نہیں کیا جا سکتا۔

یاد رہے کہ شریف خاندان کے خلاف نیب تحقیقات کر رہا ہے اور اس تحقیقات میں سب سے اہم سوال یہ ہے کہ لندن کے فلیٹس کس کے ہیں اور یہ شریف خاندان کی ملکیت میں کب آئے۔

اس حوالے سے برٹش ورجن آئی لینڈ کا مؤقف بہت اہمیت رکھتا ہے کیونکہ لندن فلیٹس کی ملکیت آف شورکمپنیوں نیلسن اور نیسکول کی ہے اور یہ دونوں کمپنیاں برٹش ورجن آئی لینڈ میں رجسٹرڈ ہیں اسلئے برٹش ورجن آئی لینڈ کا مؤقف بہت اہم ہے۔

 نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں