دنیا بھر میں کشمیری آج یوم حق خود ارادیت منا رہے ہیں

دنیا بھر میں کشمیری آج یوم حق خود ارادیت منا رہے ہیں

سری نگر: کنٹرول لائن کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں کشمیری آج یوم حق خود ارادیت منارہے ہیں۔ اس موقع پر کشمیری اس عزم کا اعادہ کریں گے کہ بھارتی تسلط سے آزادی حاصل کرنے تک وہ اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے۔


یاد رہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے 1949 میں آج ہی کے روز قرارداد منظور کی تھی جس کے مطابق کشمیریوں کو یہ حق دیا گیا تھا کہ وہ اپنی مرضی کے مطابق اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکتے ہیں۔  اس دن کی یاد میں دنیا بھر میں کشمیری ہر سال 5 جنوری کو یوم حق خود ارادیت مناتے ہیں۔

دوسری جانب مقبوضہ کشمیر کی کٹھ پتلی انتظامیہ نے کل جماعتی حریت کانفرنس کو آج سری نگر میں سیمینار سے روک دیا ہے جس کی صدارت علی سید گیلانی نے کرنا تھی۔

مقبوضہ کشمیر کی کٹھ پتلی انتظامیہ نے حریت رہنماؤں سید علی گیلانی اور میر واعظ عمر فاروق سمیت بیشتر حریت قیادت کو بھی نظر بند یا جیلوں میں قید کر دیا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کی ایک رپورٹ کے مطابق حریت رہنما اور جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک نے اپنے بیان میں کہا کہ بھارت نے کشمیر کو ایک بڑی جیل میں تبدیل کر دیا ہے۔ جہاں لوگوں کو گرفتار کرنا، حریت رہنماؤں کو نظربند کرنا اور کرفیو اور پابندیاں لگانا روز کا معمول بن گئی ہیں۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں