وہ لمحہ جب یونس خان کو خاتون پسند آگئیں اور انہوں نے اس سے فون نمبر مانگا تو کیا ہوا ؟

کراچی: پاکستان کے لیجنڈری کرکٹریونس خان نے اپنے ایک انٹرویو کے دوران گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ میں پٹھان گھرانے سے تعلق رکھتاہوں میری والدہ ایک تہجدگزارخاتون ہیں۔وہ صبح صبح چاربجے مصلے پربیٹھی ہوتی ہیں ۔میں یہ نہیں کہتاکہ میں ایک بہت اچھاانسان ہوں ۔میزبان نے یونس خان سے سوال کیاکہ آپ کی بہت ساری فین ہوں گی آپ کوکالز بھی کرتی ہوں گی لیکن آپ کادل خودکتنی بارٹوٹا۔

جس کے جواب میں یونس خان نے کہاکہ میرادل بہت دفعہ ٹوٹا۔دوہزارتین چارکی بات ہے کہ میں انگلینڈ میں ایک شاپنگ مال میں تھامجھے وہاں ایک خاتون بہت اچھی لگی میں نے پرفیوم یاایک شرٹ لینی تھی وہ مجھے یادنہیں آرہی مجھ پروہ فٹ نہیں آرہی تھی میں اسے چھوڑ کرآگے چلاگیا۔میں فرسٹ ٹائم کسی لیڈی کے پیچھے گیامجھے زیادہ مینرز نہیں آتے میں سیدھاان کے پاس گیااورکہاکہ اگرآپ مائنڈ نہ کریں توآپ مجھے اپنانمبردیدیں۔توانہو ں نے کہاکہ ’’آئی ایم ناٹ انٹرسٹڈ‘‘اس کے بعدمیں وہاں سے بھاگ گیااورپھراس قسم کی کوئی کوشش نہیں کی۔

اس سے قبل  بھی یونس خان نے ایک انٹرویو میں اپنی زندگی کے اہم راز سے پردہ اٹھا تھا جب انہوں انہوں نے کہا کہ میں 32سال کی عمر میں گھر سے بھاگا تھا۔ گھر سے بھاگنے کی دلچسپ وجہ بتاتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ  ﺍﻥ ﮐﯽ ﻭﺍﻟﺪﮦ ﻧﮯ ﺍﺱ ﻭﻗﺖ ﺍﯾﮏ ﭼﻮﺩﮦ ﺳﺎﻟﮧ ﻟﮍﮐﯽ ﺳﮯ ﺷﺎﺩﯼ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﺎ ﭘﺮﻭﮔﺮﺍﻡ ﺑﻨﺎﻟﯿﺎﺗﮭﺎ ﺟﺐ ﻭﮦ 32ﺳﺎﻝ ﮐﮯ ﺗﮭﮯ ﺟﺒﮑﮧ ﻭﮦ ﻟﮍﮐﯽﺭﺷﺘﮯ ﻣﯿﮟ میری کزن لگتی تھی۔

مصنف کے بارے میں