آئی ایم ایف کا پاکستان سے تنخواہیں، غیر ترقیاتی و دفاعی اخراجات منجمد کرنے کا مطالبہ

 آئی ایم ایف کا پاکستان سے تنخواہیں، غیر ترقیاتی و دفاعی اخراجات منجمد کرنے کا مطالبہ
جی 20 ممالک تنخواہوں میں کٹوتی کر سکتے ہیں تو پاکستان کیوں نہیں، آئی ایم ایف۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: عالمی مالیاتی فنڈ نے پاکستان سے تمام غیر ترقیاتی اخراجات منجمد کرنے سمیت آئندہ مالی سال کے بجٹ میں خسارہ کم کرنے کے لیے 1150 ارب روپے کی ایڈجسمنٹ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔


ذرائع کے مطابق آئی ایم ایف اسٹاف نے اپنے حالیہ دورہ اسلام آباد میں سخت پالیسیوں کی تجویز دی ہے۔آئی ایم ایف کی جانب سے بجٹ خسارہ کم کرنے کے لیے تنخواہیں، غیر ترقیاتی اخراجات اور دفاعی اخراجات منجمد کرنے کا مطالبہ کیا  گیا ہے۔

آئی ایم ایف حکام کا کہنا تھا کہ جی 20 ممالک تنخواہوں میں کٹوتی کر سکتے ہیں تو پاکستان کیوں نہیں۔

ذرائع کے مطابق آئی ایم ایف پروگرام کی 6 ارب ڈالر کی توسیعی فنڈ سہولت اسی وقت بحال ہو گی جب حکومت آئی ایم ایف کے میکرو اکنامک فریم ورک کے مطابق آئندہ بجٹ پیش کرے گی۔