'جھوٹی گواہی دینے والوں کو سزا سے متعلق چیف جسٹس کا بیان خوش آئند ہے'

'جھوٹی گواہی دینے والوں کو سزا سے متعلق چیف جسٹس کا بیان خوش آئند ہے'
مسلم تہذیب کی بنیاد ریاست مدینہ تھی جو سچ پر رکھی گئی ہے، وزیراعظم۔۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ جھوٹی گواہی دینے والوں کو سزا دینے سے متعلق چیف جسٹس پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ کا بیان خوش آئند ہے۔


وزیراعظم عمران خان نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ سچ کا سفر ہی نئے پاکستان کا سفر ہے اور قومیں عظیم تب بنتی ہیں جب ان کی اقدار اعلیٰ ہوں۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ مسلم تہذیب کی بنیاد ریاست مدینہ تھی جو سچ پر رکھی گئی ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز ایک کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس پاکستان نے اپنے ریمارکس میں کہا تھا کہ جھوٹی گواہی پر عمر قید ہوتی ہے۔ آج 4 مارچ 2019 سے سچ کا سفر شروع کر رہے ہیں اور تمام گواہوں کو خبر ہو جائے بیان کا کچھ حصہ جھوٹ ہوا تو سارا بیان مسترد ہو گا۔ آج سے جھوٹی گواہی کاخاتمہ کر رہے ہیں اس جھوٹے گواہ سے آغاز کر رہے ہیں۔

چیف جسٹس پاکستان کا مزید کہنا تھا جھوٹی گواہیوں نے نظام عدل کو تباہ کر کے رکھ دیا ہے۔ باپ بھائی بن کر حلف پر جھوٹ بولتے ہیں۔