عورت مارچ کا 8 مارچ کو دھرنا دینے کا اعلان مگر کہاں اور کیوں؟ تفصیلات سامنے آ گئیں

عورت مارچ کا 8 مارچ کو دھرنا دینے کا اعلان مگر کہاں اور کیوں؟ تفصیلات سامنے آ گئیں
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

کراچی: عورت مارچ نے 8 مارچ یوم خواتین کے موقع پر کراچی فرئیر ہال پر اپنے حقوق کیلئے دھرنا دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو پھر طویل المدتی دھرنا بھی دیا جا سکتا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق عورت مارچ کی منتظمین شیما کرمانی، سماجی کارکن منیزہ احمد اور دیگر نے جمعہ کے روز کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس کے دوران 8 مارچ کو دھرنا دینے کا اعلان کیا۔ خواتین رہنماؤں نے کہا کہ یہ دھرنا فرئیر ہال پر ہو گا جس کا مقصد یہ ہے کہ حکومت عورتوں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے کی جانے والی قانون سازی پر موثر عمل درآمد کرائے لیکن اگر ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو پھر طویل المدتی دھرنا بھی دیا جاسکتا ہے تاہم اس حوالے سے لائحہ عمل کا اعلان بعد میں کیا جائے گا۔ 

شیما کرمانی نے کہا کہ کاروکاری کا خاتمہ کیا جائے، عورتوں کو جنسی ہراساں کیا جارہا ہے ریاست اس بات کا نوٹس لے، عورتوں پر تشدد کیا جاتا ہے، ان کے مذہب کی جبری تبدیلی ہورہی ہے، پولیس سٹیشنوں میں خواتین اور خواجہ سرا اہلکار تعینات کئے جائیں، خواتین  ایم ایل اوز کی تعداد میں اضافہ کیا جائے۔

سماجی کارکن منیزہ نے کہا کہ کراچی میں عورت مارچ کا دھرنا 8 مارچ کو ہی ہو گا، ہمارے مطالبات پورے نہیں کئے گئے تو ہم دھرنا دیں گے، یہ چوتھا عورت مارچ ہے، عورت مارچ کا مشن عورتوں، خواجہ سرا اور غیر صنفی افراد کا اتحاد  ہے تاکہ وہ اجتماعی سماجی تبدیلی کے ذریعے انصاف حاصل کر سکیں۔