حمزہ شہباز کے وزیر اعلیٰ پنجاب بننے کے بعد گورنر پنجاب نے انتہائی قدم اُٹھانے کا فیصلہ کر لیا

حمزہ شہباز کے وزیر اعلیٰ پنجاب بننے کے بعد گورنر پنجاب نے انتہائی قدم اُٹھانے کا فیصلہ کر لیا

لاہور:گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ نے کہا ہے کہ وہ بطور گورنر لاہور ہائی کورٹ کے جج کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس بھیج رہے ہیں ، ایک انوکھے لاڈلے کے ہاتھوں پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ یرغمال بنا ہوا ہے ۔

گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عالمی سازش کی وجہ سے بھٹو کو پھانسی پر چڑھا دیا گیا، آج عمران خان کے خلاف سازش ہوئی اور ایک جمہوری حکومت کو ختم کیا گیا،انہوں نے کہاکہ  وہ بطور گورنر لاہور ہائی کورٹ کے جج کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس بھیج رہے ہیں  ایک انوکھے لاڈلے کے ہاتھوں پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ یرغمال بنا ہوا ہے۔

گورنر پنجاب کا کہنا تھا کہ    ہم سوچ رہے تھے کہ مریم اورنگزیب کوئی عوام کو ریلیف کی بات کریں گی، یہ تجربہ کارلوگ ہیں، ہم سوچ رہے تھے کہ ان کو فوری باہر سے پیسے مل جائیں گے۔گورنرپنجاب نے مزیدکہاکہ  ہم توقع کر رہے تھے کہ ان کے حلف لیتے ہی 8، 10 ارب ڈالر قومی خزانے میں آجائیں گے ۔

انہوں نے کہا جو عمران خان پر صبح شام تنقید کرتے ہیں وہ بھی احساس پروگرام سے مستفید ہوتے تھے۔پنجاب کا بحران سب کے سامنے ہے، پہلے دن سے جب سابق وزیرِ اعظم نے گورنر کے طور پر نامزد کیا، کام شروع کر دیا تھا، گورنر 80 سے 82 یونیورسٹیز کا چانسلر بھی ہوتا ہے، کم وقت میں 2 سے 3 کام کرنے میں کامیاب ہوا ہوں ۔