سلمان خان کل تک جیل میں رہیں گے، درخواست ضمانت پر فیصلہ محفوظ

سلمان خان کل تک جیل میں رہیں گے، درخواست ضمانت پر فیصلہ محفوظ

جودھ پور: سلمان خان کی درخواست ضمانت پر عدالت نے فیصلہ محفوظ کر لیا جو کل سنایا جائے گا جس کے بعد انہیں آج بھی جیل میں ہی رہنا پڑے گا۔


52 سالہ اداکار سلمان خان کے وکلا نے کالے ہرن کے شکار کے جرم میں 5 سال قید کی سزا پر ضمانت کے لئے جودھ پور کی عدالت سے رجوع کیا تھا۔

وکلا نے عدالت سے اپیل کی کہ ان کے موکل کو ضمانت پر رہا کیا جائے جب کہ عدالت نے موقف سننے کے بعد سلمان خان کی ضمانت پر رہائی سے متعلق درخواست پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

عدالت کی جانب سے درخواست ضمانت پر فیصلہ کل سنایا جائے گا اور ضمانت نہ ہونے تک وہ جودھ پور کی سینٹرل جیل میں ہی رہیں گے۔

 مزید پڑھیں: خواہش ہے پاکستانی فلم انڈسٹری بھی بھارتی انڈسٹری جیسی شاد ہوجائے،ماہرہ خان

گزشتہ روز جودھ پور کی مقامی عدالت کے چیف جوڈیشل مجسٹریٹ نے سلمان خان کو 20 سال پرانے کال ہرن کے شکار سے متعلق کیس میں 5 سال قید اور 10 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔

یاد رہے کہ سلمان خان کو جودھ پور سینٹرل جیل کی بیرک نمبر ایک میں رکھا گیا ہے جب کہ انہیں قیدی نمبر 106 الاٹ کیا گیا ہے۔ سلمان خان کے بیرک کے برابر میں بھارت کے مشہور ریپ کیس کے ملزم گاڈ مین آسام رام قید ہیں۔

ڈی آئی جی جیل وکرم سنگھ کا کہنا ہے کہ سلمان خان جب جیل میں داخل ہوئے تو اہلکاروں نے عزت و احترام کے ساتھ ان کا استقبال کیا اور ان کے ساتھ تصاویر بنوانے کا کہا لیکن سلمان خان نے منع کر دیا۔

 یہ خبر بھی پڑھیں: فلم ”باغی 2“ 100 کروڑ کلب میں داخل ہو گئی

ان کا کہنا تھا کہ سلمان سے پوچھا گیا کہ انہیں کسی چیز کی ضرورت تو نہیں جس پر سلمان نے نفی میں جواب دیتے ہوئے کہا کہ میں ٹھیک ہوں میں اس سے قبل بھی جیل میں رہ چکا ہوں تاہم انہوں نے صرف اپنے ٹوتھ برش اور نائٹ سوٹ کی درخواست کی۔

انہوں نے بتایا کہ سلمان نے بیرک میں رات عام قیدی کی طرح گزاری انہوں نے وہی پتہ دال گوبی اور چنے کی دال کھائی جو عام قیدی کھاتے ہیں۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں