ویزا میں توسیع کی درخواست معمول کی کارروائی ہے: مریم اورنگزیب

ویزا میں توسیع کی درخواست معمول کی کارروائی ہے: مریم اورنگزیب
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

لاہور: پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ برطانیہ میں نواز شریف نے ویزا میں توسیع کی درخواست کی تھی جو ایک معمول کی کارروائی ہے۔ 

مریم اورنگزیب نے میڈیا سے گفتگو کے دوران کہا کہ برطانوی ہوم آفس نے لکھا ہے کہ نوازشریف ٹربیونل میں اپیل کرسکتے ہیں، ٹریبونل کے فیصلے تک نوازشریف کی لندن میں قیام قانونی ہے۔

ترجمان (ن) لیگ نے کہا کہ انہوں نے جھوٹے الزامات لگائے اور جب ثبوت کی بات آئی تو معافی مانگی، اسی طرح شہبازشریف کے خلاف ہرجانے کیس میں بھی معافی مانگی، نوازشریف کو علاج کیلئے وفاقی اور پنجاب حکومت نے بھیجا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ کمزور حکومت سیاسی مخالفین کی صحت پر بیان دینے کے علاوہ کچھ نہیں کرتی، نوازشریف سزا سننے کے بعد بیٹی کے ساتھ پاکستان آئے تھے، نیب کی تحویل میں نواز شریف کی طبیعت خراب ہوئی۔

مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ سازش کے تحت نوازشریف کو کوٹ لکھپت سے نیب منتقل کیا گیا، پنجاب میڈیکل بورڈ کی رپورٹ پر نوازشریف کوضمانت ملی، کرائے کے ترجمانوں کو آئے دن پارٹیاں بدلتے، بیانات بدلتے شرم نہیں آتی۔