سیلفی لینے کے شوق میں نوجوان جان سے ہاتھ دھو بیٹھا

سیلفی لینے کے شوق نے ایک اور قیمتی زندگی نگل لی

سکھر:  سیلفی لینے کے شوق نے ایک اور قیمتی زندگی نگل لی۔ سکھر کے ڈان لینس پل پر نوجوان اپنی بیوی کے ہمراہ سیلفی لینے کی کوشش میں دریا میں جا گرا۔تفصیلات کے مطابق سیلفی کے شوق نے ایک اور نوجوان کی زندگی کا خاتمہ کردیا۔سکھر میں آصف جمیل نامی شخص اپنی بیوی کے ہمراہ لینس ڈان پل پر تفریح کے لیے آیا۔ اس دوران نوجوان سیلفی لیتے ہوئے دریا میں جا گرا۔ نوجوان کی اہلیہ کے مطابق جمیل رات ساڑھے 9 بجے دریا میں گرا جس کے بعد ریسکیو ٹیموں نے رات گیارہ بجے تک نوجوان کو تلاش کیا۔صبح۔آٹھ بجے دوبارہ ریسکیو آپریشن شروع کیا گیا جو تاحال جاری ہے۔

دریا میں گرنے والے نوجوان کے دوست احباب بھی دریا کے پاس کھڑے آصف کے زندہ بچ جانے کی دعائیں کر رہے ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ برس پاکستان میں سیلفی کے باعث 9 اموات ہوچکی ہیں۔ ایک رپورٹ کے مطابق اس شوق کے باعث سب سے زیادہ اموات بھارت میں ہوئیں جہاں سیلفی بنانے کے جنون نے 73 افراد کی جان لی۔

مصنف کے بارے میں