بی جے پی ترجمان کے ہتک آمیز بیان پر پاکستان کا شدید احتجاج

بی جے پی ترجمان کے ہتک آمیز بیان پر پاکستان کا شدید احتجاج

اسلام آباد: پاکستان نے بھارت کی حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے رہنماﺅں کی جانب سے نبی کریم ﷺ کی شان میں گستاخانہ بیان پر بھارتی ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کر کے شدید احتجاج کیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق دفتر خارجہ کے ترجمان کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ بی جے پی کی ترجمان کی جانب سے ہتک آمیز بیان دینے پر بھارتی ناظم امور سے سخت احتجاج کیا اور بتایا گیا کہ ان بیانات سے امت مسلمہ کے جذبات مجروح ہوئے ہیں۔ 

ترجمان نے کہا کہ بھارت میں مسلم مخالف جذبات اسلاموفوبیا کے واضح نتائج ہیں، بی جے پی رہنماؤں کے بیانات مکمل طور پر ناقابل قبول ہیں اور ان سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچی ہے، بھارتی حکومت ان رہنماؤں کے خلاف فیصلہ کن اور قابل عمل کارروائی کرے اور بی جے پی قیادت توہین آمیز بیانات کی مذمت کرے۔ 

دفتر خارجہ کے ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ بھارت میں مسلمانوں کے خلاف فرقہ وارانہ تشدد اور نفرت میں خطرناک حد تک اضافے پر تشویش ہے، بھارت اقلیتوں کے خلاف انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں روکنے کیلئے فوری اقدامات کرے۔ 

مصنف کے بارے میں