ایف آئی اے متحرک ہو گئی، مزید 8 چینی لڑکے گرفتار

ایف آئی اے متحرک ہو گئی، مزید 8 چینی لڑکے گرفتار
لاہور میں واقع ڈیوائن ہومز سے 8 چینی لڑکوں کو گرفتار کیا گیا۔۔۔۔۔فوٹو/ اسکیرن گریب نیو نیوز

2لاہور: ایف آئی اے نے کارروائی کرتے ہوئے لاہور سمیت پنجاب کے دیگر شہروں سے مزید 8 چینی لڑکے گرفتار کر لیے۔


ڈائریکٹر جنرل ایف آئی اے بشیر میمن کی ہدایت پر ڈپٹی ڈائریکٹر جمیل میو کی سربراہی میں ٹیم نے کارروائی کرتے ہوئے لاہور میں واقع ڈیوائن ہومز سے مزید 8 چینی لڑکوں کو گرفتار کر لیا ہے۔

ایف آئی اے کے مطابق چینی نوجوان پاکستانی میرج بیور اور ایجنٹس سے مل کر پاکستانی لڑکیوں سے شادی کراتے تھے۔ شادی کے بعد ان لڑکیوں سے جسم فروشی کا دھندہ کروایا جاتا تھا۔ اس بات کے بھی شواہد ملے ہیں کہ لڑکیوں کے اعضا بھی نکالے گئے۔ ایف آئی اے اس سکینڈل میں اب تک مجموعی طور پر 10 چینی لڑکوں کو گرفتار کر چکی ہے۔

خیال رہے اس سے قبل منڈی بہاؤالدین میں لڑکی سے شادی کرنے والے چینی لڑکے کی سفری دستاویزات تحویل میں لے کر تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔ چینی لڑکوں کی جانب سے مسلمان ہونے کا سرٹیفیکیٹ دکھا کر مسلمان لڑکیوں سے شادیوں کا معاملہ زور پکڑتا جا رہا ہے۔ پولیس حکام کا کہنا ہے معاملے کے قانونی پہلوؤں کو دیکھ رہے ہیں۔