ہم دن رات سیلاب متاثرین کی مدد کرنے اور عمران خان سیاست چمکانے میں مصروف ہیں: بلاول بھٹو

ہم دن رات سیلاب متاثرین کی مدد کرنے اور عمران خان سیاست چمکانے میں مصروف ہیں: بلاول بھٹو

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے چیئرمین اور وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان میں برطانیہ جتنی زمین کا حصہ زیر آب ہے لیکن اس مشکل وقت میں بھی عمران خان سیاست چمکانے میں مصروف ہیں۔ 

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ اور نثار کھوڑو کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ سیلاب کی وجہ سے کورونا سے زیادہ معیشت پر اثر پڑا ہے لیکن حکومت سندھ دن رات سیلاب متاثرین کیلئے کام کرنے میں مصروف ہے۔ 

انہوں نے کہا کہ کراچی میں تاریخی بارشیں ہوئیں اور اس سے انفرا اسٹرکچرکو ہونے والا نقصان نظر آرہا ہے مگر کراچی میں بارش سے ہونے والا نقصان سیلاب سے ہونے والے 30 ارب ڈالر کے نقصان میں شامل نہیں ہے۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا سیلاب کے باعث 40 لاکھ ایکڑ زرعی زمین پر پانی آیا، تمام موجودہ وسائل سیلاب متاثرین کی امداد پر لگادئیے ہیں، سیلاب کا 50 فیصد پانی نکالا جا چکا ہے اور مکمل پانی نکالنے کے بعد ہی اصل نقصان اور حقائق کا اندازہ ہو سکے گا جس کے بعد بحالی کا کام شروع ہو گا۔ 

بلاول بھٹو نے کہا کہ اسلام آباد کی طرف بڑھیں تو لگتا ہے الگ ملک ہے، یہ نہیں ہو سکتا کہ دو پاکستان ہوں اور ایک پاکستان میں سیاسی گیم ہوتا رہے، اس وقت ہمیں سیاست کا نہیں سوچنا، کچھ لوگ سازشیں کر رہے ہیں کہ سیلاب کے دوران ان کی حکومت کیسے آئے لیکن ہمارے لوگ زندہ رہیں گے تو سیاست کرسکیں گے۔ 

اس موقع پر انہوں نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین اور سابق وزیراعظم عمران خان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دور حکومت نے عمران خان نے خارجہ پالیسی تباہ کی اور ملک کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا اور اب مشکل وقت میں بھی سیاست چمکانے میں مصروف ہیں۔ 

چیئرمین پیپلز پارٹی نے وزیراعظم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ شہباز شریف پورے پاکستان کو اون کر رہے ہیں، وزیراعظم کے شکر گزار ہیں کہ انہوں نے سب سے زیادہ سندھ کے دورے کئے اور سیلاب متاثرین کی بھرپور مدد کرنے میں مصروف عمل ہیں۔ 

ان کا مزید کہنا تھا کہ سیلاب کے باعث معاشی اور زرعی مسائل درپیش ہیں، ہم نے ایک قوم بن کر سانحات کا مقابلہ کرنا ہے، اقوا متحدہ (یو این ) سیکرٹری جنرل پاکستان پہنچے اور میں ان کا شکرگزار ہوں کہ وہ بھرپور مصروفیات کے باوجود پاکستان آئے اور سیلاب سے ہونے والے نقصان کو دیکھا۔ 

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عالمی برادری کے سامنے سیلاب کے باعث پاکستان میں ہونے والی تباہی کا مقدمہ پیش کیا، امیر ممالک نے امیر بننے کیلئے ہم پر بوجھ ڈالا اور موسمیاتی تبدیلیاں لے آئے، ہم عالمی برادری سے بھیک نہیں بلکہ انصاف کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

مصنف کے بارے میں