بجلی مزید 3 روپے 39 پیسے مہنگی کر دی گئی

بجلی مزید 3 روپے 39 پیسے مہنگی کر دی گئی

اسلام آباد: نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کے ذریعے فی یونٹ بجلی کی قیمت میں 3 روپے 39 پیسے کے مزید اضافے کی منظوری دیدی۔ 

تفصیلات کے مطابق بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کی سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کی درخواست پر چیئرمین نیپرا توصیف ایچ فاروقی کی زیر صدارت سماعت ہوئی جس دوران اتھارٹی کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ سہ ماہی کے دوران ڈالر 200 روپے تک جانے کا تخمینہ تھا، جو 240 روپے تک بھی گیا۔

بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کی جانب سے گزشتہ مالی سال کی آخری سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کیلئے درخواست دی گئی تھی اور 95 ارب 14 کروڑ روپے کا اضافہ مانگا تھا جس پر نیپرا کے حکام نے بتایا کہ سہ ماہی کے دوران کیپیسٹی پرچیز پرائس 55 ارب روپے تک پہنچ گئی۔ دوران سماعت وائس چیئرمین نیپرا نے ریمارکس دئیے کہ بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کو جرمانے کرتے ہیں تو وہ عدالتوں میں چلی جاتی ہیں۔

سماعت مکمل ہونے پر نیپرا حکام نے بتایا کہ سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کے ذریعے فی یونٹ بجلی 3 روپے 39 پیسے تک مہنگی ہو گی اور یہ اضافہ اکتوبر سے دسمبر تک ہر ماہ 3 روپے 39 پیسے فی یونٹ وصول ہو گا، سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا حتمی تفصیلی فیصلہ جانچ پڑتال کے بعد جاری ہو گا۔

نیپرا حکام کے مطابق اس سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا اطلاق کے الیکٹرک پر نہیں ہو گا۔ چیئرمین نیپرا توصیف ایچ فاروقی نے کہا کہ اس وقت 3 روپے 20 پیسے فی یونٹ کی پچھلی ایڈجسٹمنٹس وصول کی جا رہی ہیں تاہم جب اس سہ ماہی کی وصولی شروع ہو گی تو پرانی ایڈجسٹمنٹس کی وصولیاں ختم ہو جائیں گی اور اس طرح سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا مجموعی اثر 19 پیسے فی یونٹ رہ جائے گا۔

مصنف کے بارے میں