امریکہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے پر نظرثانی کرے: پرویز مشرف

امریکہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے پر نظرثانی کرے: پرویز مشرف

دبئی : سابق پاکستانی صدر پرویز مشرف   نے کہا کہ امریکہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے پر نظرثانی کرے.انہوں نے کہا کہ امریکی فیصلہ اسلامی دنیا کے لئے مایوس کن ہے.ٹرمپ کی پالیسیاں دنیا کو تباہی کی طرف دھکیل رہی ہیں.انہوں نے مزید کہا کہ بڑے اسلامی ممالک حالات کا جائزہ لے کر متفقہ لائحہ عمل اختیار کریں. پرویز مشرف کا کہنا ہے کہ  او آئی سی کو ایسے اقدامات کرنے چاہئیں کہ جن سے امریکہ اپنا فیصلہ واپس کرنے پر مجبور ہو جائے.
یاد رہے کہ کل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے   بیت المقدس   کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان کیا جس کے بعد مسلم دنیا میں ہنگامہ برپا ہو گیا ۔ سارے اسلامی ممالک ٹرمپ کے اس فیصلے کو احمقانہ فیصلہ قرار دے رہے ہیں ۔