ریلوے حادثات کی ذمہ دار (ن) لیگ اور پیپلز پارٹی ہیں: فواد چوہدری

ریلوے حادثات کی ذمہ دار (ن) لیگ اور پیپلز پارٹی ہیں: فواد چوہدری
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چودری نے ریلوے حادثات کا ذمہ دار پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی کو قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ دونوں جماعتیں ریلوے میں سرمایہ کاری کرتیں تو آج حادثات نہ ہوتے۔ 

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی ریلوے میں سرمایہ کاری کرتے تو آج حادثات نہ ہوتے، نواز شریف کی حکومت نے ریلوے ٹریک ہی خرید لئے، اورنج ٹرین لائن پر خرچ کیا گیا اور اگر یہ پیسہ ریلوے پر خرچ ہوتا تو حادثات کا سامنا نہ کرنا پڑتا۔

ان کا کہنا تھا کہ ریلوے حادثے کی ابتدائی رپورٹ پیش کردیتا ہوں جس کے مطابق 1388مسافر دونوں ٹرینوں میں سوار تھے اور واقعے کی انکوائری کی جارہی ہے، ٹریک کی مرمت کیلئے سامان پہنچا دیا گیا ہے، ریلوے کے معاملات سالہا سال نظر انداز ہوتے رہے جس کی وجہ سے حادثات ہوتے ہیں۔

واضح رہے کہ ڈہرکی کے قریب ملت ایکسپریس اور سرسید ایکسپریس کے تصادم سے کئی بوگیاں پٹری سے اتر کر الٹ گئیں جس کے نتیجے میں 40 مسافر جاں بحق ہو گئے۔ حادثے سے متعلق ڈی ایس ریلوے طارق لطیف نے بتایا کہ ملت ایکسپریس کی بوگیاں پٹری سے اترنے کے 2منٹ بعد ہی سرسید ایکسیریس متاثرہ بوگیوں سے ٹکراگئی۔

ڈی ایس ریلوے سکھر طارق لطیف کے مطابق ٹرین حادثہ 3 بجکر 45 منٹ پر ہوا، حادثے کے بعد اپ اینڈ ڈاﺅن ریلوے ٹریفک معطل ہے، دونوں اطراف کی تمام مسافر ٹرینیں بڑے بڑے سٹیشنوں پر روک لی گئی ہیں۔

دوسری جانب سرسید ایکسپریس کے زخمی ڈرائیور کا کہنا ہے کہ شہریوں کے اشارے پر ایمرجنسی بریک لگایا کہیں اور سے اطلاع نہیں ملی تھی۔ زخمی ڈرائیور نے اپنے بیان میں کہا کہ ریتی سٹیشن کے سگنل گرین ملے تھے، ریتی کے سٹیشن ماسٹر سے بھی بات ہوئی اس نے بھی کلیئر کیا، گاڑی مقررہ رفتار سے جارہی تھی کہ شہریوں کو اشارہ کرتے دیکھا تو ایمرجنسی بریک لگایا۔